جنوبی پنجاب میں آپریشن:267فوڈ پوائنٹس کو نوٹس‘ متعدد کو جرمانے

جنوبی پنجاب میں آپریشن:267فوڈ پوائنٹس کو نوٹس‘ متعدد کو جرمانے

  

ملتان (سٹاف رپورٹر)جنوبی پنجاب میں‘ فوڈ اتھارٹی ٹیموں کی کارروائیاں‘267فوڈ پوائنٹس کو نوٹس‘ متعدد کو جرمانے‘200 لیٹر ملاوٹی دودھ، 75 کلو ملاوٹی مصالحہ جات، 333 لیٹر سوڈا و اٹر تلف‘ مضرصحت مٹھائی کی فروخت پر دکاندار کو جرمانہ کر دیا۔تفصیلات کے مطابق فوڈ سیفٹی ٹیموں نے ملتان ڈویژن میں کارروائیاں کرتے ہوئے 2 فوڈ پوائنٹس کو 7500 روپے کے جرمانے کیے، 220 لیٹر ایکسپائر کاربونیٹڈ ڈرنکس تلف کر دیا گیا،ڈویژن بھر میں 72 فوڈ پوائنٹس کو چیک کیا گیا جبکہ 69 کو اصلاحی نوٹسز جاری کیے گئے، ساہیوال ڈویژن میں کاروائی کے دوران نیو لاسانی چرغہ ہاؤس کو رینسڈ آئل کے استعمال پر 10 ہزار روپے جبکہ آرائیں ملک کولیکشن سنٹر کو ملاوٹی دودھ فروخت کرنے پر 5 ہزار روپے جرمانہ کیا گیا اور 10 لیٹر دودھAائنٹس کو چیک کیا گیا جبکہ 71 کو اصلاحی نوٹسز جاری کیے گئے۔اسی طرح دورانِ چیکنگ ڈی جی خان کے اضلاع میں کریانہ سٹور اور سوئٹس شاپ کو 5,500 روپے جرمانہ ناقابلِ سراغ مٹھائی اور 25 کلو ملاوٹی سرخ مرچ تلف کر دی گئی، ڈویژن بھر میں 86 فوڈ پوائنٹس کو چیک کیا گیا جبکہ 81 کو اصلاحی نوٹسز جاری کیے گئے، بہاولپور ڈویژن میں 51 فوڈ پوائنٹس کو چیک کیا گیا جبکہ 46 کو اصلاحی نوٹسز جاری کیے گئے، رحیم یار خان میں شہباز، عمران اور بسم اللہ ملک شاپ کو ملاوٹی دودھ کی فروخت پر جرمانے، اجمل چکن سموسہ کو 2 ہزار اور مدنی کریانہ سٹور کو 8 ہزار روپے کے جرمانے، مجموعی طور پر رحیم یار خان میں 17 ہزار روپے کے جرمانے عائد کیے گئے، شاپس میں موجود 290 لیٹر دودھ چیک کیا گیا، 190 لیٹر مضر صحت دودھ تلف کر دیا گیا، 50 کلو مصالحے اور دیگر ایکسپائر خوراک موقع پر تلف کر دی گئی۔

جرمانے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -