پٹرول بحران برقرار، جلالپور میں دکان پرچھاپہ، تیل ضبط، 4افراد گرفتار

پٹرول بحران برقرار، جلالپور میں دکان پرچھاپہ، تیل ضبط، 4افراد گرفتار

  

کوٹ ادو، جلالپور، شادن لُنڈ (تحصیل رپورٹر نامہ نگار، نمائندہ پاکستان) کوٹ ادووگردونواح میں قائم پٹرول پمپس مالکان نے پٹرول ذخیرہ موجودہونے کے باوجودپٹرول کی فروخت کو محدود کرکے بحران پیداکررکھاہے،شہری علاقہ سے باہرایک دو پٹرول پمپ دن میں صرف ایک بارانتظامیہ کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کیلئے شہریوں کوشدیدگرمی(بقیہ نمبر17صفحہ6پر)

میں جمع کردیاجاتاہے اورشہریوں کوکئی کئی گھنٹے انتظارکرانے کے باوجودصرف 50روپے کاپٹرول دیکربندکردیاجاتا اورباقی دیگرشہریوں کوگھنٹوں انتظارکے بعدخالی ہاتھ مایوس ہوکرلوٹناپڑتاہے جبکہ پمپس مالکان رات کے وقت پٹرول ایجنسیزکومہنگے دام فروخت کررہے ہیں شہری پمپس پرشدیدگرمی میں خوارہونے کے بعد مجبورہوکرایجنسیزمالکان سے 130روپے سے لیکر150روپے لیٹرپٹرول خریدنے پرمجبورہوکررہ گئے ہیں انتظامیہ پٹرول مافیاکے سامنے بے بس ہوکررہ گئی ہے,شہریوں نے کمشنر ڈیرہ غازیخان،ڈپٹی کمشنر مظفرگڑھ سمیت اعلی حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیاہے۔ جلالپور پیروالہ میں 17ویں روز بھی پٹرول کی مسلسل قلت برقراررہے اور عوامی شکایات پر اسسٹنٹ کمشنر غلام سرور نے شہر کے مختلف پٹرول پمپوں کا دورہ کیا اور پٹرول کے سٹاک اور نرخوں کا جائزہ لیا۔ اس دوران پرمٹ روڈ پر واقع کھل کی ایک دْکان پر 120 روپے فی لیٹر پٹرول کی فروخت کی اطلاع ملنے پر چھاپہ مارا تو دْکان کے ساتھ پی ایس او کا آئل ٹینکر بھی موجود پایا۔ اسسٹنٹ کمشنر نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ مذکورہ دْکان سے 3 ہزار لیٹر پٹرول غیر قانونی طور پر مہنگے داموں فروخت کیا گیا جس کی شکایت کچھ خریداروں نے دفتر اسسٹنٹ کمشنر کو دی تھی، علاوہ ازیں مذکورہ دْکان سے ذخیرہ کی گئی 22 بوری چینی بھی برآمد ہوئی۔ اسسٹنٹ کمشنر نے دْکان کو سِیل کر کے ٹرک ڈرائیور سمیت 4 ملزمان محمد رمضان، محمد اسماعیل، محمد خلیل اور عبد الرشید کو حوالہ پولیس کر دیا، پولیس نے ملزمان کو حراست میں لے کر اس سلسلہ میں تفتیش کا آغاز کر دیا ہے۔ 18 روز گزر جانے کے باوجود بھی شادن لُنڈ اور گردونواح میں پٹرول نایاب ہے پٹرول پمپس پر تیل کی سپلائی روزانہ آتی ہے مگر مافیا کے ہاتھوں بلیک پر فروخت کردیا جاتا ہے جو منی ایجنسی مالکان 120سے150روپے فی لیٹر کے حساب سے فروخت کر رہے ہیں مگر حکومت اور ضلعی انتظامیہ مافیا کے ہاتھوں بے بس نظر آتی ہے پٹرول کی مصنوعی قلت پیدا کر کے ناجائز منافع کمانے والوں کے خلاف کوئی کاروائی نہ ہوسکی عوامی و سماجی حلقوں نے حکومت اور ضلعی انتظامیہ کی بے حسی پر افسوس کا اظہار کیا اور فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کیا۔

گرفتار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -