سٹاک مارکیٹ میں پھر مندی انڈیکس 170.44پوائنٹس گرگیا

سٹاک مارکیٹ میں پھر مندی انڈیکس 170.44پوائنٹس گرگیا

  

کراچی (اکنامک رپورٹر)پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں ایک روزہ تیزی کے بعد بدھ کو پھر مندی غالب آگئی اور کے ایس ای100انڈیکس 34ہزار پوائنٹس کی نفسیاتی حدسے گرتے ہوئے 170.44 پوائنٹس کی کمی سے33848.68پوائنٹس کی سطح پر آ گیا جب کہ 57.78فیصد حصص کی قیمتوں میں کمی ریکارڈ کی گئی جس کے نتیجے میں سرمایہ کاروں کو 9ارب 9کروڑ92لاکھ روپے کا نقصان اٹھاناپڑا۔ پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں گزشتہ روز کو کاروبار کا آغاز مثبت زون میں ہوا،سرمایہ کاروں اور مالیاتی اداروں کی فوڈز،کیمیکل،پیٹرولیم سیکٹرز میں سرمایہ کاری کی بدولت ٹریڈنگ کے دوران انڈیکس34396پوائنٹس کی بلد سطح کو چھو گیا تاہم بعد ازاں حصص کی فروخت کا دباوٗ بڑھنے سے تیزی کے اثرات زائل ہوگئے اور مارکیٹ مندی کی لپیٹ میں آگئی جس کے سبب ٹریڈنگ کے دوران انڈیکس 34ہزار پوائنٹس کی نفسیاتی حد سے گرتے ہوئے 33775.76پوائنٹس کی نچلی سطح پر آگیا بعد میں ریکوری آنے سے مزکوہ حد برقرار نہ رہ سکی لیکن مندی غالب رہی اورمارکیٹ کے اختتام پرکے ایس ای100انڈیکس 170.44پوائنٹس کی کمی سے33848.68پوائنٹس پر بند ہوا۔اسی طرح کے ایس ای30انڈیکس 113.94پوائنٹس کی کمی سے 14632.79پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 34.35پوائنٹس کی کمی سے24339پوائنٹس ہوگیا۔گذشتہ روز 379کمپنیوں کے حصص کاروبار ہوا جن میں سے135کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ 219میں کمی اور25میں استحکام رہا۔مندی کے سبب سرمائے کا مجموعی حجم 64کھرب57ارب 92کروڑ96لاکھ روپے سے گھٹ کر64کھرب48ارب83کروڑ4لاکھ روپے ہو گیا۔حصص کی لین دین کے لحاظ سے بدھ کو کاروباری حجم21کروڑ79لاکھ 25ہزار حصص کے سودے ہوئے جو منگل کی نسبت12کروڑ29لاکھ30ہزار شیئرز زائد ہے۔قیمتوں میں اتار چڑھاوکے اعتبار سے فلپ موریس پاک کے حصص کی قیمت 119.05روپے کے اضافے سے 2019روپے اور نیسلے پاکستان کے حصص کی قیمت99روپے کے اضافے سے6500روپے ہو گئی جبکہ60روپے کے کمی سے سیپ ہائرٹیکس کے حصص کی قیمت790روپے اورسیپ ہائرفائبر30روپے کی کمی سے 670روپے پر آ گئی۔نمایاں کاروباری سرگرمیوں کے لحاظ سے یونٹی فوڈز،جہانگیر صدیقی،ایگری ٹیک لمیٹیڈ،نیمر ری سنز،ٹی پی ایل کارپوریشن،ہم نیٹ ورک،میرٹ پیکجنگ،دی سرل کمپنی اور کوئس فوڈکے حصص سرفہرست رہے۔عالمی مارکیٹ میں فی اونس سونے کی قیمت میں کمی کے باعث ملکی صرافہ مارکیٹوں میں بھی ایک تولہ سونا300روپے کی کمی سے98ہزار600روپے ہوگئی۔آل سندھ صراف جیولرز ایسوسی ایشن کے مطابق بدھ کو عالمی مارکیٹ میں 15ڈالرکی کمی سے فی اونس سونے کی قیمت1715ڈالر ہو گئی جس کے بعد ملکی صرافہ مارکیٹوں میں 300روپے کی کمی سے ایک تولہ سونے کی قیمت98ہزار600روپے اور دس گرام سونے کی قیمت257روپے کی کمی سے 84ہزار534روپے ہو گئی۔انٹر بینک اور مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں بدھ کو بھی روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر میں اضافے کا رجحان برقرار رہااور ڈالر 166روپے کی بلند سطح پر پہنچ گیا۔فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ روز انٹر بینک میں روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر میں 65پیسے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے ڈالر کی قیمت خرید164.85روپے سے بڑھ کر165.50روپے اور قیمت فروخت165.15روپے سے بڑھ کر166روپے ہو گئی اسی طرح مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کی قدر میں 70پیسے کا اضافہ ہوا جس کے بعد ڈالر کی قیمت خرید164.80روپے سے بڑھ کر165.50روپے اور قیمت فروخت165.30روپے سے بڑھ کر166 روپے پر جا پہنچی۔فاریکس رپورٹ کے مطابق یورو کی قیمت خرید184روپے اور قیمت فروخت186روپے مستحکم رہی جب کہ برطانوی پونڈ کی قیمت خرید 205روپے اور قیمت فروخت207روپے برقرار رہی۔سعودی ریال کی قیمت خرید 43.20روپے اور قیمت فروخت43.70روپے مستحکم رہی جب کہ یواے ای درہم کی قیمت خرید44.20روپے اورقیمت فروخت 44.70روپے برقرار رہی۔

سٹاک مارکیٹ

مزید :

پشاورصفحہ آخر -