چین نے بھاری گولہ بارود سرحد پر پہنچادیا، بھارت بڑی مشکل میں

چین نے بھاری گولہ بارود سرحد پر پہنچادیا، بھارت بڑی مشکل میں
چین نے بھاری گولہ بارود سرحد پر پہنچادیا، بھارت بڑی مشکل میں

  

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) تبت کے علاقے میں چین اور بھارت کے درمیان کشیدگی نئے عروج کو پہنچ چکی ہے اور جنگ کا خطرہ سر پر منڈلانے لگا ہے۔ گزشتہ دنوں دونوں ممالک کی افواج میں ہونے والی ہلاکتوں کے بعد ایک طرف بھارت کی طرف سے منہ توڑ جواب کی دھمکی دی جا رہی ہے تو دوسری طرف چین نے تبت کے علاقے میں اپنی فوجی مشقوں کو ٹی وی پر لائیو دکھا کر اپنی طاقت کی نمائش شروع کر رکھی ہے۔

میل آن لائن کے مطابق بھارتی حکومت پر ملک کے مختلف حلقوں کی طرف سے چین سے اپنے 20فوجیوں کی ہلاکت کا انتقام لینے کے لیے دباﺅ بڑھ رہا ہے۔ دوسری طرف چین نے بھی اعلان کر دیا ہے کہ بھارتی فوج کے ساتھ تصادم میں اس کے43فوجی ہلاک ہو چکے ہیں۔دونوں ممالک کی طرف سے اب یہ بھی بتادیا گیا ہے کہ یہ ہلاکتیں پتھروں اور ڈنڈوں سے ہونے والے تصادم میں ہوئیں۔ 1975ءکے بعد چینی اور بھارتی فوج کے درمیان یہ پہلا تصادم تھا جس میں کوئی ہلاکت ہوئی۔

دونوں افواج کے درمیان پتھروں اور گھونسوں مکوں کی لڑائیاں پہلے بھی ہوتی رہتی تھیں تاہم اس بار ہلاکتیں ہونے کے بعد چین نے بھاری اسلحہ اس متنازعہ علاقے میں پہنچانا شروع کر دیا ہے اور خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ آئندہ دونوں ملکوں میں اگر تصادم ہوتا ہے تو بھاری نقصان کا خطرہ ہو گا۔ بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے بھی دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ ”ہمارے فوجیوں کی قربانی رائیگاں نہیں جائے گی۔ بھارت امن چاہتا ہے لیکن کسی بھی جارحیت کا ہم منہ توڑ جواب دیں گے۔“چین کی طرف سے جن جنگی مشقوں کو ٹی وی پر لائیو دکھایا گیا ہے ان میں 7ہزار سے زائد فوجی حصہ لے رہے تھے اور ان مشقوں میں چین کے کچھ سب سے زیادہ طاقتور ہتھیار استعمال کیے جا رہے تھے، جن میں 15لائٹ ٹینک اور ایچ جے 10اینٹی ٹینک میزائل بھی شامل تھے۔

مزید :

بین الاقوامی -