بلوچستان کا آئندہ مالی سال کا 500ارب سے زائد کا بجٹ آج پیش کیا جائے گا

بلوچستان کا آئندہ مالی سال کا 500ارب سے زائد کا بجٹ آج پیش کیا جائے گا
بلوچستان کا آئندہ مالی سال کا 500ارب سے زائد کا بجٹ آج پیش کیا جائے گا

  

کوئٹہ (ڈیلی پاکستان آن لائن )بلوچستان کا آئندہ مالی سال 2021-22کا بجٹ آج پیش کیا جائے گا۔بجٹ کا کل حجم 500ارب سے زائد ہونے کا امکان ہے۔

نجی ٹی وی 92نیوز کے مطابق بلوچستان اسمبلی میں بجٹ اجلاس کا آغاز شام چار بجے ہو گا جبکہ صوبائی وزیر خزانہ ظہور بلیدی بجٹ پیش کریں گے۔حکومتی ذرائع کے مطابق بجٹ خسارہ 100ارب روپے تک ہوگا۔

حکومتی ذرائع کا کہنا ہے کہ آئندہ مالی سال کے بجٹ میں شعبہ تعلیم کے لئے 90ارب اور صحت کے لئے 40ارب روپے مختص کئے جانے کا امکان ہے جبکہ امن و امان کے لئے60ارب روپے مختص کئے جائیں گے۔بجٹ میں ترقیاتی اخراجات کے لئے 140ارب مختص کئے گئے ہیں جبکہ غیر ترقیاتی اخراجات کے لئے 370روپے رکھے گئے ہیں۔

ذرائع کے مطابق بلوچستان کو آئندہ مالی سال میں 400ارب روپے کی آمدن حاصل ہوگی جبکہ وفاق سے قابل تقسیم محاصل کے ذریعے 295ارب روپے حاصل ہوں گے۔صوبے کی اپنی آمدنی اور وفاق سے دیگر مدعات میں ملنے والی رقم 105ارب روپے تک ہوگئی۔

مزید :

قومی -بجٹ -علاقائی -بلوچستان -کوئٹہ -