پاک سعودی تعلقات موجودہ دور میں زیادہ مستحکم ہوئے ہیں: مولانا طاہر اشرفی

پاک سعودی تعلقات موجودہ دور میں زیادہ مستحکم ہوئے ہیں: مولانا طاہر اشرفی
پاک سعودی تعلقات موجودہ دور میں زیادہ مستحکم ہوئے ہیں: مولانا طاہر اشرفی

  

ریاض (وقار نسیم وامق) وزیراعظم پاکستان عمران خان کے نمائندہ خصوصی مشرق وسطیٰ مولانا طاہر اشرفی کا کہنا ہے کہ پاک سعودی تعلقات ماضی کی نسبت موجودہ دور میں زیادہ مستحکم ہوئے ہیں اور پاک سعودی تعلقات نئے دور میں داخل ہوچکے ہیں. 

سعودی دارالحکومت ریاض میں مجلس پاکستان کی جانب سے منعقدہ تقریب کے شرکاء سے اظہار خیال کرتے ہوئے وزیراعظم پاکستان کے نمائندہ خصوصی برائے مشرق وسطیٰ کا کہنا تھا کہ سعودی عرب سمیت تمام خلیجی ممالک سے تعلقات کا نیا دور شروع ہوچکا ہے سعودی عرب میں پاکستانی کیمونٹی اور ورکرز کے مسائل حل ہونا شروع ہوگئے ہیں تمام خلیجی ریاستوں سے پاکستانی ورکرز کے لئے ویزوں کا اجراء ہو رہا ہے جس سے پاکستانیوں کو بڑے پیمانے پر روزگار میسر آ رہا ہے. 

فلسطین کے ایشو پر اظہارِ خیال کرتے ہوئے مولانا طاہر اشرفی نے کہا کہ پاک سعودی پالیسی یکساں طور پر آگے بڑھ رہی ہے اور فلسطینیوں کی آزادی تک یہ پالیسی جاری رہے گی. مسئلہ کشمیر سے متعلق مولانا طاہر اشرفی نے کہا کہ سعودی عرب نے ہمیشہ مقبوضہ کشمیر پر پاکستان کا ساتھ دیا ہے اور سعودی قیادت کشمیر ایشو پر پاکستان کے موقف کی حمایت کرتی ہے اور اسلامی تعاون تنظیم مسلمان ممالک کی نمائندہ جماعت ہے اور یہی تنظیم امت مسلمہ کے اتحاد کو یقینی بناتی ہے اور مسائل کو حل کرنے میں مددگار ثابت ہوتی ہے. 

اس موقع پر انہوں نے سعودی عرب میں پاکستانی کیمونٹی سے متعلق مسائل اور تجاویز کو بھی سنا اور شرکائے تقریب کو یقین دلایا کہ ان مسائل کا ہرممکن حل کیا جائے گا. تقریب سے مجلس پاکستان کے صدر رانا عبدالرؤف اور جنرل سیکرٹری حافظ عبدالوحید نے بھی پاک سعودی تعلقات پر اظہار خیال کیا. 

مزید :

تارکین پاکستان -