جوبائیڈن اور پیوٹن کی ملاقات، امریکی صدر نے روسی ہم منصب کو تحفے میں کیا دیا؟تفصیلات سامنے آگئیں 

جوبائیڈن اور پیوٹن کی ملاقات، امریکی صدر نے روسی ہم منصب کو تحفے میں کیا ...
جوبائیڈن اور پیوٹن کی ملاقات، امریکی صدر نے روسی ہم منصب کو تحفے میں کیا دیا؟تفصیلات سامنے آگئیں 

  

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) جوبائیڈن کے امریکہ کا صدر منتخب ہونے کے بعد سے روسی ہم منصب کے ساتھ ان کا سخت جملوں کا تبادلہ جاری تھا، حتیٰ کہ جوبائیڈن روسی ہم منصب کو قاتل بھی قرار دے چکے تھے، تاہم گزشتہ ہفتہ ان دونوں عالمی رہنماؤں کے درمیان پہلی بار خوشگوار تعلقات دیکھے گئے جب جنیوا میں ان کی پہلی ملاقات ہوئی۔ نجی ٹی وی چینل 24نیوز کے مطابق اس ملاقات میں امریکی صدر جوبائیڈن نے روسی ہم منصب کو امریکی ساختہ چشمہ تحفے میں دیا۔ 

یہ چشمہ امریکی کمپنی رینڈولف انجینئرنگ کا تیار کردہ ہے جو امریکی فوج کو بھی چشمے فراہم کرتی ہے۔ کمپنی کے سربراہ پیٹر ویزکیوکز کا کہنا تھا کہ ”اس روز اچانک فون کی گھنٹیاں بجنی شروع ہو گئیں اور ہمارے سوشل میڈیا پیجز پر صارفین کی سرگرمیاں بہت زیادہ بڑھ گئیں۔ہمیں بعد ازاں پتا چلا کہ ہماری کمپنی کا تیار کردہ چشمہ صدر جوبائیڈن نے تحفے میں ولادی میر پیوٹن کو دیا ہے جس کی وجہ سے صارفین زیادہ تعداد میں کمپنی کے متعلق سرچ کر رہے تھے۔“ 

پیٹر نے بتایا کہ ”ہمارا 1978ء سے امریکی فوج کے ساتھ معاہدہ چلا آ رہا ہے، جس کے تحت امریکی فوج ہر سال ہم سے 25ہزار چشمے خریدتی ہے۔“رپورٹ کے مطابق یہ خاصی محنت سے تیار ہونے والا چشمہ ہے جس کی تیاری میں 6ہفتے لگتے ہیں۔ رینڈولف کی ویب سائٹ پر اس کی قیمت 279ڈالر (تقریباً 43ہزار روپے)بتائی گئی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -