لین اور لائن ڈسپلن کو کو یقینی بنا کر موٹروے پولیس کو ایشیاءکا ماڈل ادارہ بنائیں گے

لین اور لائن ڈسپلن کو کو یقینی بنا کر موٹروے پولیس کو ایشیاءکا ماڈل ادارہ ...

  

                    لاہور ( زاہد علی خان ) قومی شاہرات پر لین اور لائن ڈسپلن کو 100% تک یقینی بنایا جائے گا ۔ موٹر وے پولیس کی پچھلے چند ماہ سے جاری انفو رسمنٹ اور بریفنگ مہمات سے بہتر ےن نتائج حاصل ہوئے ہیں ۔ ہم موٹروے پولیس کو ایشیا ءکا بہترین اور ماڈل اِ دارہ بنائیں گے۔ ان خےالات کا اظہار نےشنل ہائی وےز اےنڈ موٹر وے پولےس اےن فا ئےو سنٹرل زون کے کمانڈر ڈی آئی جی مرزا شکیل احمدنے پاکستان فورم میں کےا۔ ڈی آئی جی مرزا شکیل ا حمد نے مزےد کہا کہ نیشنل ہائی ویز ایند موٹر وے پولیس کا آغاز 1997 میں لاہور تا اسلام آباد موٹر وے پرہوا اس فورس نے اپنے آغاز کے ساتھ ہی بہترین اور موثر حکمت عملی کے ساتھ نہ صرف اندرون ملک بلکہ بیرون ملک بھی اپنی شناخت کو قائم رکھا ۔ موٹر وے پولیس کی ابتدائی کامیابیوں کو دیکھتے ہوئے گورنمنٹ آف پاکستان نے موٹر وے پولیس کو تمام نیشنل ہائی ویز پرقانون کے نفاذ کرنے کی ذمہ داری سونپ دی۔ اس ادارے نے اپنی کامیابیوں کا لوہا نہ صرف موٹر ویز پر منوایا بلکہ تمام نیشنل ہائی ویز پر بھی اعلی کارکر دگی کا ایک عمدہ معیار قائم کیا ہے۔ڈی آئی جی مرزا شکیل ا حمد نے کہا کہ پاکستان کی تاریخ میں یہ پہلا ادارہ ہے جس نے اپنی ایمانداری پیشہ وارانہ کارکردگی ،دیانتداری،عوام کو مدد فراہم کرنے کے جذبے اور اپنے کام کے ساتھ لگن سے نہ صرف عوام کے اندر اپنی ایک الگ پہچان قائم کرلی بلکہ یہ ادارہ باقی تما م اداروں کے لیے ایک رول ماڈل کی حیثیت اختیار کر چکا ہے ۔ڈی آئی جی مرزا شکیل احمدنے کہا کہ نیشنل ہائی ویز اینڈ موٹر وے پولیس روڈ یوزرز کو تمام مشکل حالات میں مدد فراہم کرتی ہے۔ نیشنل ہائی ویز پورے ملک میں پھیلی ہوئی ہے اور ذیادہ ایریا ویران اور بے آباد علاقوں سے گزرتا ہے ایسے میں روڈ یوزر کی چھوٹی پرابلم بھی اسے پریشان کرتی ہے ۔مثلاًٹائر پنکچر ہونا،انجن کا گرم ہوجانا، مکینکل پرابلم ہونافیول یا انجن آئل ختم ہوجانا،الیکٹریکل پرابلم یا لائٹس وغیرہ کا پرابلم ہونا۔ریڈی ایٹر یا وائپر کا خراب ہوجانا اس کے علاوہ دوران سفر کسی شے کا گم ہوجانایا سفر میں گمشدہ بچوں کو والدین تک پہچانا۔ جیسی ہیلپس یہ ادارہ کرتاہے۔ہماری ہیلپ لائن 130چوبیس گھنٹے روڈ یوزرز کی مدد کے لیے تیار ہے ۔ آپ 130 ڈائل کریں گے تو آپ کا رابطہ آپ کے قریب ترین موٹر وے کنٹرول روم سے ہوگا جس سے آپ دوران سفر کسی بھی قسم کی معلومات یا ہیلپ سکتے ہیں سنٹرل زون کے کمانڈر ڈی آئی جی مرزا شکیل احمد نے موٹر وے پولیس کے مقاصد بتاتے ہو ئے کہا کہ نیشنل ہائی ویز ا ور موٹر ویز پر ٹریفک کو کنٹرول کرنا اور سلسلے میں ٹریفک ڈسپلن قائم کرنے کے لیے اقدامات کرنا۔ہائی ویز پر لاءاینڈ آرڈر کویقینی بنانا۔روڈ یوزرز کی حفاظت کو یقینی بنانا ۔روڈ یوزرز کو ٹریفک قوانین کے بارے میں بریفنگ اور ایجوکیشن دینا۔ہائی ویز کو تمام قسم کی تجاوزات سے پاک کرنا۔نیشنل ہائی ویز اینڈ موٹر پولیس کا سب سے ز یادہ زور عوام کو مشکل حالات میں مدد فراہم کرنا ہے۔نیشنل ہائی وے اتھارٹی کے ساتھ قریبی رابطہ رکھنااور بہتری کے سلسلے میں تجاویز دینا۔روڈ فرنیچر کی تنصیب اور معائنہ کرنا۔ ٹریفک قوانین کو بلا تفریق نافذ کرنا ۔ڈی آئی جی مرزا شکیل احمدنے کہا کہ نیشنل ہائی ویز اینڈ موٹر وے پولیس بہترین افراد پر مشتمل ادراہ ہے جس کے لیے بنیادی طور پر تعلیم یافتہ، بہترین شخصیت اور اچھے اخلاق کے حامل افراد کو بھرتی کیا جاتا ہے۔گریجویٹ یا پوسٹ گریجویٹ افرادجو کہ ڈرائیونگ لائسنس ہولڈر ہوں کو عام طور پر فیڈرل پبلک سروس کمیشن کے ذریعے بطور پٹرولنگ آفیسر بھرتی کیا جاتاہے ۔دیگر وسول آفس سٹاف کو ادارہ حسب ضرورت خودبھرتی کرتاہے۔بھرتی کے تما م عمل میں میرٹ کو ہر حال میں یقینی بنایا جاتا ہے۔

مرزا شکیل احمد

مزید :

صفحہ آخر -