جاگیردارانہ نظام ہو تو جمہوریت نہیں آ سکتی، ایم کیو ایم کا کاررواں اقتدار کے ایوانوں تک پہنچے گا: الطاف حسین

جاگیردارانہ نظام ہو تو جمہوریت نہیں آ سکتی، ایم کیو ایم کا کاررواں اقتدار کے ...
جاگیردارانہ نظام ہو تو جمہوریت نہیں آ سکتی، ایم کیو ایم کا کاررواں اقتدار کے ایوانوں تک پہنچے گا: الطاف حسین
کیپشن: Altaf Hussain

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے کہ ظلم کی چکی میں پسنے سے تحریکیں جنم لیتی ہیں اور شہیدوں کا خون تحریکوں کی آبیاری کرتا ہے، ایک دن ایم کیو ایم کا کاررواں اسلام آباد کے ایوانوں تک پہنچے گا۔ ایم کیو ایم کے یوم تاسیس کے اجتماع سے ٹیلی فونک خطاب کرتے ہوئے الطاف حسین نے کہا کہ جاگیردارانہ اور وڈیرانہ نظام والے ملک میں جمہوریت پروان نہیں چڑھ سکتی کیونکہ جاگیردارانہ، وڈیرانہ نظام اور جمہوریت ایک دوسرے کی ضد ہیں۔ الطاف حسین نے کہا کہ انہیں گرفتار کر کے ان پر جھوٹے الزامات لگائے گئے، ان کا پورا خاندان اجڑ گیا، بھائی اور بھتیجے کو شہید کر دیا گیا، وہ 20 سال سے پاکستان سے دور ہیں لیکن تحریک کو نہیں چھوڑا، تحریک کا سیلاب بڑھتے بڑھتے اسلام آباد کے ایوانوں تک پہنچے گا۔ انہوں نے کہا کہ کرپٹ سسٹم کو تبدیل کرنے کیلئے کوئی آیا ہے تو فوج سے ہی آیا ہے، ملک کی بقاءاور خودمختاری کو بیچ دیا گیا ہے جبکہ چند ٹکوں کی خاطر فوج کو دوسرے ممالک میں بھیج دیا جاتا ہے، حکمرانو! عراق اور شام کے فسادات میں افواج کو نہ الجھاﺅ۔ الطاف حسین نے کہا کہ ہم اپنی غیرت بیچ چکے ہیں اور بے غیرت ہو گئے ہیں اور جو چند ٹکوں کی خاطر غیرت بیچ چکے وہ اپنی بہن بیٹیوں کی کیسے حفاظت کریں گے؟ مظفر گڑھ میں خودسوزی کرنے والی آمنہ کا ذکر کرتے ہوئے الطاف حسین نے کہا کہ آمنہ کے ملزموں کے خلاف کارروائی کیوں نہیں کی گئی؟ اگر ہم ایوانوں میں ہوتے تو دیکھتے آمنہ کے قاتل کیسے باہر پھرتے ہیں، ایک ہفتہ اقتدار مل جائے، تھانیداروں کو سرعام نہ لٹکایا تو مجھے لٹکا دینا۔

مزید :

کراچی -