وہ ایک وقت جب مرد چیزیں خریدتے ہوئے ان کی قیمت کا دھیان نہیں رکھتے اور سستی اشیاءبھی مہنگے داموں خرید لیتے ہیں، سائنسدانوں نے مَردوں کو خبردار کردیا

وہ ایک وقت جب مرد چیزیں خریدتے ہوئے ان کی قیمت کا دھیان نہیں رکھتے اور سستی ...
وہ ایک وقت جب مرد چیزیں خریدتے ہوئے ان کی قیمت کا دھیان نہیں رکھتے اور سستی اشیاءبھی مہنگے داموں خرید لیتے ہیں، سائنسدانوں نے مَردوں کو خبردار کردیا

  

بوسٹن (نیوز ڈیسک) محبت انسان کی شخصیت اور رویے میں واقعی انقلاب برپا کردیتی ہے، یہاں تک کہ پیسہ بچانے کی فطری انسانی خصلت بھی رومانوی جذبات کی رو میں بہہ جاتی ہے۔ یونیورسٹی آف کولوراڈو بولڈر کے سائنسدانوں کی ایک حالیہ تحقیق میں یہی ثابت ہوا ہے کہ اگرچہ انسان ہر حال میں بچت کی کوشش کرتا ہے لیکن جب وہ محبت کا اظہار کرنا چاہتا ہے تو اس وقت کم خرچ کی بجائے زیادہ خرچ کی طرف مائل ہو جاتا ہے۔ سائنسدانوں نے اس تحقیق کے دوران ثابت کیا کہ جب مرد کسی سے پیار کے اظہار کے لئے تحفہ خریدنے نکلتے ہیں تو ان کے دل سے بچت کا خیال محو ہو جاتا ہے ، اور اکثر غیر معمولی حد تک زیادہ قیمت بھی بآسانی دینے کو تیار ہو جاتے ہیں۔ منگنی یا شادی کی انگوٹھی خریدنے والوں میں یہ رویہ واضح طور پر دیکھا جاسکتا ہے۔ تقریباً 245 افراد پر کئے گئے تجربات سے ثابت ہوا کہ جب کوئی مرد منگنی یا شادی کی انگوٹھی خریدنے نکلتا ہے تو سستی انگوٹھی کی بجائے مہنگی انگوٹھی خریدنے کی طرف زیادہ مائل ہوتا ہے۔

یونیورسٹی کے لیڈز سکول آف بزنس سے وا بستہ پروفیسر پیٹر میک گرا کہتے ہیں کہ اس رویے کی بنیادی وجہ یہ ہے کہ انسان فطری طور پر پیار کی قیمت لگانا پسند نہیں کرتا۔ جب کوئی شخص اپنے کسی پیارے کے لئے تحفہ خریدتا ہے تو اس کی کوشش ہوتی ہے کہ اپنا مفاد مدنظر رکھنے کرنے کی بجائے اپنی محبت کی تسکین کرے۔

مزیدجانئے: مردوں کو کن خواتین کی جانب سب سے زیادہ کشش محسوس ہوتی ہے؟ سائنسدانوں کا ایسا انکشاف کہ جان کر مرد خود بھی حیران رہ جائیں

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ یہ صورتحال بعض دکانداروں کے لئے بہت فائدہ مند ثابت ہوتی ہے۔ ان دکانداروں میں تحائف فروخت کرنے والے سرفہرست ہیں، جو عموماً سالگرہ ، شادی اور دیگر ایسے مواقع کے لئے مخصوص اشیاءفروخت کرتے ہیں۔ انہیں معلوم ہوتا ہے کہ ان کے گاہک بچت کی کوشش نہیں کریں گے اور نہ ہی مول تول میں پڑیں گے، لہٰذا یہ انہیں لوٹنے کو تیار رہتے ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -