ایل ڈی اے ایو نیو ون ،اربوں روپے کی اراضی رجسٹری کے بغیر فروخت

ایل ڈی اے ایو نیو ون ،اربوں روپے کی اراضی رجسٹری کے بغیر فروخت

  

لاہور (اقبال بھٹی)لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی سکیم ایل ڈی اے ایونیو ون ہا ؤسنگ کے ایل بلاک میں اربوں روپے کی تین سو کنال اراضی کو بغیر رجسٹری کے بیچ دیا گیا موضع بھوبتیاں پر بنائی جانے والی اس آبادی کا نام سردار ٹاؤن رکھاگیا ہے یہ ٹاؤن ایل ڈی اے کی ایکوائر زمین پر بنایا گیا ہے جس کا ایوارڈ بھی 2003میں بحق اتھارٹی ہو چکا ہے ذرائع نے بتایا ہے کہ یہ جگہ 2005تک خالی تھی اس کے بعد قبضہ مافیا نے ایل ڈی اے کے سٹیٹ مینجمنٹ ڈائریکٹوئیٹ ایل ڈی اے ایونیو ون کے عملے کی ملی بھگت سے قبضے کروائے اور لوگوں کو یہاں آباد ہونے میں مدد کی اور اتھارٹی کا اربوں روپے کا نقصان کیا اور اپنی جیبیں بھریں ذرائع کا مزیدکہنا تھا کہ اہل کاروں نے بڑے منظم طریقے سے قبضہ مافیا کو سپورٹ کیا ایک یا دو دفعہ غیر قانونی تعمیرات کو گرایا بھی مگر معمولی نقصان کیا اور آہستہ آہستہ قبضہ مافیا کو کامیاب کروایا اور موقعہ پر تعمیرات کرنے میں قبضہ مافیا کی پوری پوری مدد کی اور اتھارٹی کو اربوں روپے کا نقصاب پہنچایا اس حوالے سے جب ایل ڈی اے کے افسران سے بات کی گئی تو انہوں نے کہا سردار ٹاؤن ایل ڈی اے کی جگہ پر ہی بنایا گیا ہے شروع شروع میں اتھارٹی نے تعمیروں کو گرایاتھا مگر اب سردار ٹاؤن والے کورٹ میں ہیں کورٹ کی طرف سے جو بھی فیصلہ آئے گا ایل ڈی اے اس کے مطابق کاروائی کرے گی روز نامہ پاکستان کے سوال پر کہ ایل ڈی اے کی ایکوائر شدہ اور ایوارڈبھی ایل ڈی اے نے سنا دیا ہے اس پر ناجائز تعمیر ہوناعجیب سالگتا ہے اس پر افسران کا کہنا تھا قبضہ مافیا انکروچمنٹ کرنے کے بعد کورٹ سے رجوع کر لیتا ہے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -