کشمیری قیدیوں کی زندگیوں سے کھیلنے کی کوشش نہ کی جائے ، حریت کانفرنس

کشمیری قیدیوں کی زندگیوں سے کھیلنے کی کوشش نہ کی جائے ، حریت کانفرنس

  

سری نگر(کے پی آئی)کل جماعتی حریت کانفرنس نے مطالبہ کیا ہے کہ کشمیری قیدیوں کی زندگیوں سے کھیلنے کی کوشش نہ کی جائے ، انہیں بہتر طبعی سہولیات ،معقول غذائیں اور صاف و شفاف پانی میسر کیا جائے اور انہیں عدالتوں میں تاریخ پیشیوں پر حاضر کرنے کے اقدامات کرئے۔حریت کانفرنس کی خاتون رہنما اورمسلم خواتین مرکز جموں کشمیر کی چیرپرسن یاسمین راجہ نے کہا کہ ڈسٹرکٹ جیل بارہمولہ میں حریت پسند نظر بند شدید مشکلات کا شکار ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمیں اس بات کی اطلاح موصول ہوئی ہے کہ ضلعی جیل بارہمولہ میں حریت پسند نظر بندوں کو پیشی پر نہیں لے جایا جارہا ہے اور انہیں معقول غذائیں نہیں دی جارہی ہیں اور جیل میں صاف پانی کی بھی شدید قلت ہے جس کی وجہ سے نظربندوں کو مختلف قسم کی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔محترمہ یاسمین راجہ نے کہا کہ ناقص غذاؤں اور پانی کی قلت کی وجہ سے نظر بند ؤں کی صحت پر برے اثرات مرتب ہورہے ہیں اور بیمار ہونے کی صورت میں انہیں مناسب طبعی سہولیات فراہم نہیں کی جارہی ہے۔ یاسمین راجہ نے کہا کہ حریت پسندؤں کے خلاف بھارتی حکمرانوں ،قابض فورسز ،بھارتی خفیہ ایجنسیوں اور یہاں کی قابض انتظامیہ کی پالیسیاں انتہائی جبر و استبدادی اور استعماری رہی ہیں اور جو حریت پسند حصو لِ حق خودارادیت کے لئے بر سرِ جدوجہد ہیں ان کا ہر سطح پر قافیہ حیات تنگ کیا جاتا ہے اور جو حریت پسند قید خانوں میں نظر بند ہیں ،ان کی صحت و سلامتی کو بھی شدید خطرات سے دوچار کیا جارہا ہے۔ یاسمین راجہ نے بھارت کی استبدادی اور استعماری پالسیوں کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ضلعی جیل بارہمولہ کے حکام پر زور دیا کہ وہ نظربندؤں کی زندگیوں سے کھیلنے کی کوشش نہ کریں اور انہیں بہتر طبعی سہولیات ،معقول غذائیں اور صاف و شفاف پانی میسر کیا جائے اور انہیں عدالتوں میں تاریخ پیشیوں پر حاضر کرنے کے اقدامات کرئے۔

مزید :

عالمی منظر -