لاہور‘دو روزہ انٹرنیشنل لائیو سٹاک ،ڈیری اینڈ پولٹری نمائش اختتام پذیر

لاہور‘دو روزہ انٹرنیشنل لائیو سٹاک ،ڈیری اینڈ پولٹری نمائش اختتام پذیر

  

لاہور(پ ر)پاکستان ویٹرنری میڈیکل ایسوسی ایشن اور پی وی ایم سی کے زیر اہتمام ایکسپو سنٹر میں دو روزہ انٹرنیشنل لائیو سٹاک ،ڈیری اینڈ پولٹری کانگریس اختتام پزیر ہو گئی،انٹرنیشنل کانگریس کے دوسرے روزڈاکٹر عبدالقدیر خان مہمان خصوصی تھے ، جبکہ پی وی ایم سی کے صدر ڈاکٹر محمد ارشد نے اختتامی خطاب میں کہا کہ پاکستان میں رواں معاشی سال میں لائیو سٹاک ، ڈیری ڈویلپمنٹ اور پولٹری سمیت ایگری کلچر سیکٹر میں2.9فیصد اضافہ اس بات کا مظہر ہے کہ پاکستان میں لائیو سٹاک اور ڈیری، پولٹری کی صنعت میں ترقی کے وسیع مواقع موجود ہیں ۔ڈکٹر عبدالقدیر خان نے کہا کہ پی وی ایم سی کی کوششوں سے آج عام آدمی کو بھی غذائیت سے بھرپور لیکن سستی پروٹین کا حصول ممکن ہوا ہے، انہوں نے پی وی ایم سی اور پی وی ایم اے کو لاہور میں کامیاب کانگریس کے انعقاد پر خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ آئی ایل ڈی پی سی میں بیس سے زائدبیرون ممالک سمیت پاکستان کی سو سے زائد کمپنیوں کی شرکت نے پاکستان کوسرمایہ کاری کے لئے ایک کامیاب ملک ثابت کیا ہے،انہوں نے کہا کہ دودھ اور گوشت کی ترسیل کے لئے حکومتی سطح پر اقدامات کی ضرورت ہے تاکہ لوگ حلال اور حرام گوشت کھانے کی پریشانی سے بچ سکیں۔آئی ایل ڈی پی سی کے صدر ڈاکٹر ارشد کا کہنا تھا کہ پاکستان میں لائیوسٹاک اور اس کے کاروبار سے منسلک اداروں اور افراد کی ترقی کے لئے پی وی ایم سی، پی وی ایم ائے اور پاکستان ویٹرنری میڈیکل فاونڈیشن کے اقدامات سے لائیو سٹاک کی صنعت کو سہارا ملا ہے ، انہوں نے کہا کہ پاکستان دنیا بھر میں لائیو سٹاک اینڈ ڈیری ڈویلپمنٹ میں چوتھے نمبر پر ہے اور اگر مزید محنت کی جائے تو دودھ کی پیداوار میں اضافہ کرنے سے کسان کو خوشحال بنایا جا سکتا ہے۔

، جس کے لئے زرعی اقدامات کے کئے حکومتی توجہ درکار ہے، چیف آرگنائزر آئی ایل ڈی پی سی ڈاکٹر مزمل شاہ کا کہنا تھا کہ کانگریس کی کامیابی ٹیم ورک کا نتیجہ ہے اور آئندہ سالوں میں اس ایونٹ کو مزید بہتر کرنے کی کوشش کریں گے تاکہ بیرون ممالک سے زیادہ سے زیادہ سرمایہ کاروں کو راغب کیا جا سکے، سیکرٹری کانگریس طلعت ضمیم نے کہا کہ ایکسپو سنٹر میں ادویات، سائیلج اور دیگر پراڈکٹس سمیت سامان اور مشینری کے سٹالز سے یہ اندازہ لگانا مشکل نہیں کہ کسان بھی جدید طریقے اپنا کر نہ صرف اپنی پیداوار بڑھا رہا ہے بلکہ آنے والے دنوں میں اس انڈسٹری کو ترقی دینے میں معاون ہے،آئی ایل ڈی پی سی میں سسائنسدانوں، ریسرچرز، کسانوں کے نمائندوں اور سول سوسائٹی کے افراد نے بھرپور شرکت کی اور آئی ایل ڈی پی سی کے کامیاب انعقاد کو سراہا۔انٹرنیشنل کانگریس سے ایل اینڈ ڈی ڈی کی صنعت سے وابستہ افراد سمیت فرانس، جرمنی، اٹلی، ہنگری، کوریا اور چین کے ماہرین نے بھی خطاب کیا جبکہ فرانس ، جرمنی اور چین کی کمپنیوں نے پاکستان کے ، پولٹری، لائیو سٹاک اور ڈیری سیکٹر میں مقامی کمپنیوں کے ساتھ دو ارب روپے سے زائد کی سرمایہ کاری کے معاہدوں پر بھی دستخط کئے ہیں۔

مزید :

کامرس -