سانحہ ماڈل ٹاؤن کی غیر جانبدارانکوائری نہیں ہونے دی گئی، جوادحامد

سانحہ ماڈل ٹاؤن کی غیر جانبدارانکوائری نہیں ہونے دی گئی، جوادحامد

  

لاہور(نامہ نگار)انسداد دہشت گردی کی عدالت کے جج خواجہ ظفراقبال نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کیس میں عوامی تحریک کی طرف سے دائر استغاثے میں مدعی جوادحامد کابیان قلمبند کرنے کے بعد سماعت آج 18مارچ تک ملتوی کردی۔انسداد دہشت گردی کی عدالت میں عوامی تحریک کے ایڈمنسٹریٹرحامد جوادکی طرف سے سانحہ ماڈل ٹاؤن کیس میں دائراستغاثہ کی سماعت ہوئی۔ عدالت میں مدعی جوادحامدکا بیان قلمبندکیا گیا۔ بیان میں جوادحامدنے کہا حکومت نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کی غیر جانبدارانہ انکوائری نہیں ہونے دی۔ انہوں نے جن ملزمان کانام دیاتھاان میں سے کسی ایک کوبھی ایف آئی آر میں نہیں رکھاگیا۔ایف آئی آر میں صرف پولیس ملازمین کونامزدکرکے چالان پیش کردیئے گئے،جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم نے بھی ان کوشامل تفتیش نہیں کیا۔عدالت میں پیش کئے گئے دوچالانوں کی تفتیش سے وہ مطمئن نہیں اسی لئے استغاثہ داخل کرناپڑا۔استدعا ہے ان کے جوملزمان ہیں ان کوطلب کرنے کاحکم دیا جائے۔ عدالت نے جودادحامدکے بیان کے بعدمزیدکارروائی کے لئے سماعت ملتوی کردی،آج 18مارچ کو مزید گواہ عوامی تحریک کی طرف سے پیش کئے جائیں گے۔عدالت میں پولیس نے سانحہ ماڈل ٹاؤن میں انسپکٹرعامرسلیم سمیت 42ملزما ن کے خلاف دو الگ الگ چالان پیش کررکھے ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -