اغوا کا جرم ثابت ہونے پر ملزم کو 2مرتبہ موت ،1سال قید کی سزا

اغوا کا جرم ثابت ہونے پر ملزم کو 2مرتبہ موت ،1سال قید کی سزا

  

راولپنڈی(نیوز رپورٹر)انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کے جج آصف مجید اعوان نے حساس ادراے کے 7سالہ بیٹے کو اغواء کرکے 20لاکھ روپے وصول کرنے کے بعد رہا کرنے والے ملزم کو جرم ثابت ہونے پر 2مرتبہ سزائے موت ، 1سال قید سخت ،منقولہ و غیر منقولہ جائیداد ضبط کرنے اور ایک لاکھ روپے جرمانہ ادا کرنے کا حکم دیا ہے،ملزم عبدالرحمان کے خلاف تھانہ روات پولیس نے مقدمہ درج کرکے تحقیقات شروع کیں، ملزم پر الزام ہے کہ وہ حساس ادارے کے آفیسر کرنل ساجد شریف کے 7سالہ بیٹے محمد عمر کو 22فروری 2015ء اغواء کرکے 26لاکھ روپے تاوان مانگا جو 20لاکھ روپے ادا کر دیا گیا تو ملزم نے بچے کو چھوڑ دیا، پولیس نے ملزم کو پاکپتن سے گرفتار کرکے 19لاکھ80ہزار روپے کی رقم برآمد کرلی، ملزم حساس ادارے کے آفیسر کے گھر واقع فیز 8خالد بلاک میں ملازم تھا جہاں پر اس کی ماکان سے تلخ کلامی ہوتی تو ملازمت سے نکال دیا گیا تھا جس نے بدلہ لینے کیلئے بچے کو اغواء کر لیا، عدالت نے گزشتہ روز مقدمہ کی سماعت مکمل کرنے کے بعد مذکورہ بالا فیصلہ سنا دیا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -