انتہا پسندی کی سوچ ختم کئے بغیر دہشتگردی پر قابو پایا نہیں جا سکتا :سلطان محمد خان

انتہا پسندی کی سوچ ختم کئے بغیر دہشتگردی پر قابو پایا نہیں جا سکتا :سلطان ...

  

چارسدہ (بیور و رپورٹ) معاشرے سے انتہا پسندی کی سوچ ختم کئے بغیر دہشت گردی پر قابو پایا نہیں جا سکتا۔ ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت قوم کے نو نہالوں کو زیور تعلیم سے محروم رکھنے کیلئے تعلیمی اداروں کو دہشت گردی کا نشانہ بنا یا جا رہا ہے ۔ جدید علوم کے بل بوتے پر ترقی یافتہ قومیں بام عروج پر پہنچ چکی ہے ۔ ہم سب کو عہد کرنا ہو گا کہ ملک کی ترقی اور استحکام کیلئے پاک فوج کے شانہ بشانہ دہشت گردوں کے خلاف ڈٹے رہیں نگے ۔ ایم پی اے سلطان محمد خان ۔ تفصیلات کے مطابق آئی پی ایل کالج چارسدہ میں سپیک فار پیس کے موضوع پر ایک تقریب زیر صدارت پرنسپل سجاد خان منعقد ہوا۔ تقریب سے خطاب کر تے ہوئے ا یم پی اے سلطان محمد خان ،وطن پال کے صوبائی چےئرمین قیصر خان ، ترجمان میمونہ ایڈوکیٹ ،ضلعی ممبر ظفر خان ،حبیب اللہ جان اور کالج پرنسپل سجا د خان نے خطے میں جاری دہشت گردی کی شدید مذمت کی اور کہا کہ ترقی یافتہ قومیں جدید علوم کے بل بوتے پر بام عروج پر پہنچ چکے ہیں مگر بد قسمتی سے خیبر پختون اور ملک کے دیگر حصوں میں دہشت گردی نے عوام بالحصوص طلباء پر منفی اثرات مرتب کئے ہیں جس کی وجہ سے ملک کی ترقی کا پہیہ رک چکا ہے ۔ پاکستان کے نوجوان انتہائی با صلاحیت ہیں اور دہشت گردی کے باوجود پوری دنیا میں وہ اپنے ٹیلنٹ کا مظاہرہ کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے پہلے انتہا پسندانہ سوچ کو ختم کرنا ہو گا جس کیلئے معاشرے کے ہر فرد کو اپنی ذمہ داری ادا کرنا ہو گی ۔ مقررین نے خواتین کی تعلیم کی اہمیت پر روشنی ڈالی اور کہا کہ ملک کی مجموعی آبادی کا 52فی صد خواتین پر مشتمل ہے مگر بد قسمتی سے معاشرتی مسائل اور روایات کی وجہ سے خواتین کو حصول علم سے محروم رکھا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ تعلیم یافتہ ماں بچوں کی بہترین پر ورش کے ساتھ ساتھ بہترتعلیم بھی فراہم کر سکتی ہے ۔ تعلیم یافتہ خواتین سے معاشرے پر مثبت اثرات مر تب ہو سکتے ہیں۔ مقررین نے دہشت گردی کے خاتمہ اور انتہا پسندی کی سوچ ختم کرنے کا عزم کر تے ہوئے کہا کہ کہ ہم سب کو آج عہد کرنا ہو گا کہ ملک کی ترقی اور استحکام کیلئے پاک فوج کے شانہ بشانہ دہشت گردوں کے خلاف ڈٹے رہیں نگے اور پاکستان کو ایک ترقی یافتہ اور خوشحال ملک بنانے کیلئے اپنی تمام تر توانائیاں صرف کرینگے ۔ تقریب کے آخر میں دہشت گردی کے خلاف جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے سیکیورٹی فورسسز کے جوانوں اور شہریوں کے بلند درجات کیلئے اجتماعی دعا کی گئی ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -