چارسدہ میں 32کنال اراضی پر لیدر ویلج کا قیام عمل میں لایا جا رہا ہے :عبدالکریم خان

چارسدہ میں 32کنال اراضی پر لیدر ویلج کا قیام عمل میں لایا جا رہا ہے :عبدالکریم ...

  

پشاور( پاکستان نیوز)وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا کے معاون خصوصی برائے صنعت وحرفت عبدالکریم خان نے کہا ہے کہ پاک افغان تجارتی روابط بڑھانے اوردونوں ملکوں کے مابین باہمی تجارت کی سرگرمیوں کو فروغ دینے کی غرض سے خیبرپختونخوا چیمبر آف کامرس اورانڈسٹری اورپاک افغان ٹریڈ رزکی ایک مشترکہ ورکشاپ کاجلد انعقاد کیاجائے گا۔ جس کا مقصد صوبے کے تاجروں اورصنعکاروں کودرپیش مسائل کے حل کے لے لائحہ عمل تلاش کرناہے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے جمعرات کے روز پشاور میں محکمہ صنعت وحرفت کی کاکردگی کے ایک جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں سیکرٹری صنعت آٖفتاب اکبردرانی ،چیف ایگزیکٹیوں آفیسر خیبرپختونخوا بورڈ آف انوسٹمنٹ اینڈ ٹریڈر نزیر احمد اعوان ،ایم ڈی سمال انڈسٹریز ڈویپلمنٹ بورڈ رشید خان پائندہ خیل، صوبائی چیف سمیڈا جاوید خٹک اورڈائریکٹر صنعت اخونزادہ انورسید کے علاوہ دیگرمتعلقہ حکام نے شرکت کی۔ اجلاس میں صوبے میں صنعتی شعبے کی ترقی کیلئے موجودہ صوبائی حکومت کے اقدامات پر تفصیلی غوروخوض ہوااور صوبے میں مقامی صنعتوں کے فروغ کے لئے متعدد تجاویز اورحکمت عملی مرتب کرنے کے بارے میں امور کو زیر بحث لایاگیا۔ اس موقع پر معاون خصوصی نے کہا کہ ضلع چارسدہ میں چمڑے کی صنعت کے لئے پہلے سے مختص کی گئی 32 کنال سرکاری اراضی مطلوبہ مقاصدکیلئے استعمال میں لایا جارہاہے اور وہاں پر لیدر ویلج کا قیام جلدعمل میں لایا جارہاہے جبکہ سمال انڈسٹریز ڈویلپمنٹ بورڈ کے زیر انتظام اسلام آباد میں ایک ڈسپلے سنٹر کو بھی جلدقائم کیاجارہاہے۔ جس میں صوبے میں تیار ہونے والی مختلف اشیاء کورکھا جائے گا جس میں سلام پورشال، چارسدہ چپل، رجڑ کے کھدڑ اوردیگر صوبائی سطح پر تیار ہونے والی اشیاء شامل ہیں جن سے کاٹیج انڈسٹری کے فروغ میں مددملے گی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -