پاکستانی برآمدات مین اضافے کیلئے فیشن، ڈیزائننگ شعبوں پر توجہ دی جائے: صدر ممنون حسین

پاکستانی برآمدات مین اضافے کیلئے فیشن، ڈیزائننگ شعبوں پر توجہ دی جائے: صدر ...

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)صدر مملکت ممنون حسین نے کہا ہے کہ پاکستانی برآمدات میں اضافے کے لیے فیشن اور ڈیزائننگ کے شعبوں پر بھر پور توجہ دینے کی ضرورت ہے۔ اس سے قومی معیشت میں استحکام پیدا ہونے کے ساتھ ساتھ ملک میں روزگار کے مواقع بڑھیں گے اور تعلیم کا معیا بھی بہتر ہوگا۔صدر مملکت نے یہ بات پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف فیشن اینڈ ڈیزائن کی سینیٹ کے پانچویں اجلاس سے صدارتی خطاب کرتے ہوئے کہی۔ اس موقع پر وفاقی وزیر تجارت اور انسٹی ٹیوٹ کے پرو چانسلر انجینئرخرم دستگیر، سینیٹر روبینہ خالد ، رکن قومی اسمبلی شیریں ارشد خان اوروفاقی سیکریٹری کامرس بھی موجود تھے۔ اجلاس میں پی۔آئی۔ایف۔ڈی کی سالانہ رپورٹ اور آئندہ سال کے بجٹ کی منظوری بھی دی گئی۔صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان میں فیشن اور ڈیزائن کی تعلیم ایک نیا تصور ہے جس پر زیادہ توجہ دینے کی ضرورت ہے تاکہ ملکی پیداوار بین الاقوامی معیار سے ہم آہنگ ہو سکے اور مقامی مصنوعات میں بہتری آسکے۔ انہوں نے کہا کہ برآمدی مقاصدکے لیے فیشن اور ڈیزائن کے عالمی معیار کو برقرار رکھنا ضروری ہے لیکن ہمارے طلبہ کو اپنی تہذیبی اور دینی روایات کو بھی اپنے پیشِ نظر رکھنا چائیے تاکہ اس شعبے میں نئی راہیں تلاش کی جا سکیں۔صدر مملکت نے کہا کہ قومی ترقی اور معیار تعلیم میں اضافے کے لیے ضروری ہے کہ اساتذہ مالی مسائل سے دوچار نہ ہوں اور انھیں ان کی ضروریات کے مطابق معاوضے دیئے جائیں۔ انھوں نے ہدایت کی کہ پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف فیشن اینڈ ڈیزائن کے اساتذہ و دیگر عملے کے معاوضوں میں اضافے کے جلد سفارشات تیار کی جائیں۔صدر مملکت نے کہا کہ دہشت گردی اور انتہا پسندی کی وجہ سے ہمارے نوجوان مایوسی کا شکار ہیں، ان کی مایوسی کو امید میں بدلنے کے لیے محنت سے کام کرنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس مقصد کے لیے ایک جامع پروگرام کے تحت وہ نوجوانوں سے رابطہ رکھتے ہیں اور تعلیمی اداروں کے دورے کرتے ہیں ۔

مزید :

ملتان صفحہ اول -