ہر بخار، کھانسی، یا سانس لینے میں تکلیف کرونا نہیں، حکماء

ہر بخار، کھانسی، یا سانس لینے میں تکلیف کرونا نہیں، حکماء

  



لاہور (این این آئی)دنیا بھر میں کرونا وائرس میں مبتلا افراد کی تعداد1لاکھ73ہزار سے تجاوز کرگئی ہے۔ جبکہ پاکستان میں 195افراد کرونا وائرس میں مبتلا ہیں۔(بقیہ نمبر61صفحہ12پر)

بخار،کھانسی اور سانس لینے میں دشواری کی صورت میں عوام کو احتیاطی تدابیر اختیارکرنا ضروی ہے۔ کرونا وائرس 19 کے سبب نظام تنفس کی نئی بیمار ی سامنے آئی ہے۔ جوکہ کئی دیگر ممالک میں پھیل گئی ہے۔ ان خیالات کا اظہار ماہرینِ طب پروفیسرحکیم محمد احمد سلیمی،پروفیسرحکیم سید عمران فیاض،پروفیسرحکیم محمد افضل میو،پروفیسرحکیم طاہر نوید جنجوعہ،پروفیسرحکیم امجد وحید بھٹی ،پروفیسرحکیم محمد ابو بکر،پروفیسرحکیم وڈاکٹر عمر فاروق گوندل اور ڈاکٹر سکندر حیات زاہد نے پاکستان طبی کانفرنس کے زیر اہتمام کرونا وائرس اور احتیاطی تدابیر کے موضوع پر منعقدہ طبی مذاکرہ سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ کرونا وائرس سے گھبرانے کی ضرورت نہیں۔ اور نہ ہی ہر بخار، کھانسی، یا سانس لینے میں تکلیف کرونا وائرس ہے۔ انہوں نے کہاکہ اس کا سب سے بڑا علاج نماز ہے۔ کیونکہ اگر آپ 5 وقت نماز پڑھتے ہیں تو آپ کو وضو کرنا پڑتا ہے۔ جوکہ اس کا سب سے بڑا علاج ہے۔ اپنا طبی معائنہ کرواتے رہیں۔

حکماء

مزید : ملتان صفحہ آخر