میر شکیل الرحمان کی گرفتار ی آزادی صحافت پر قدغن ہے، میاں افتخار حسین

میر شکیل الرحمان کی گرفتار ی آزادی صحافت پر قدغن ہے، میاں افتخار حسین

  



پبی (نما ئندہ پاکستان)عوا می نیشنل پار ٹی کے مرکزی جنرل سیکر ٹری میان افتحار حسین نے کہا میر شکیل الر حمن کی گرفتاری آزادی صحا فت پر قد غن نیب کو حکو مت مخا لف کو ہرا سال کر نے اور دبا نے کے لئے استعمال کیا جا رہا ہے پبی اب ایک شہر بن گیا ہے اس میں مو با ئل فونز کے لئے مختص مارکیٹ ایک اچھا اقدام ہے اس سے عوام کو سہو لت میسر ہو نگے حکو مت کے لئے بھی چا ہئے کہ وہ بھی اس قسم کے مار کیٹ بنا ئیں اور اس کے ساتھ سا تھ نجی سطح پر بھی مخصوص مار کیٹیں بنا نا چا ئیں اس سے لو گوں کو روز گار بھی میسر ہو گا ان خیا لات کا اظہار انہوں نے مین بازار پبی میں گل موبائیل زون اور طارق شنواری موبائیل سنٹر کا افتتاح کے موقع پر عوام سے خطاب اور میڈیاکے نما ئندوں سے بات چیت کر تے ہو ئے کیا میاں افتحار حسین نے کہا کہ نیب کی جانب سے میر شکیل الر حمن کی گرفتاری مو جود ہ حکو مت کی میڈیا کو پا بند رکھنے کی پا لیسی کا تسلسل ہے محسوس کیا جا رہا ہے کہ نیب آزاد ادارہ نہیں رہا نیب حکو مت مخا لف کو ہرا سال کر نے اور دبا نے کے لئے استعمال کیا جا رہا ہے جنگ جیو دی نیوکے ایڈ یٹر انچیف میرشکیل الر حمن کی گرفتا ری اسی سلسلے کی کڑی وانتقا می کاروا ئی نظر آ رہی ہے ان کو فوری طور پر رہا کریں انہوں نے کہا کہ اب پبی نے شہر کی شکل اختیار کی ہے جو ایک اچھی بات ہے کہ یہاں پر ہر ایک اشیاء کے الگ الگ مار کیٹ ہو مو با ئل مارکیٹ کا افتتاح کر کے میرا دل خوش ہوا پبی بازار پر تحصیل پبی کا بہت بڑا علاقہ ہے جو پبی پر انحصار کر تا ہے یہاں بہت سہو لیات کی ضرورت ہے سر کاری سطح پر بھی اور نجی سطح پر ہو نا چا ہئے انہوں نے کہا کہ نجی سطح پر لو گوں کو چا ہئے کہ وہ پبی بازارمزید میں سہو لیات لو گوں دیں اور حکو متی سطح پر اقدا مات ہو نا چا ہئے

مزید : پشاورصفحہ آخر