لوڈ شیڈنگ پوری قوم کا سب سے اہم مسئلہ بن گئی ‘شوبز کی شخصیات کا اظہار

لوڈ شیڈنگ پوری قوم کا سب سے اہم مسئلہ بن گئی ‘شوبز کی شخصیات کا اظہار
لوڈ شیڈنگ پوری قوم کا سب سے اہم مسئلہ بن گئی ‘شوبز کی شخصیات کا اظہار

  

لاہور(حسن عباس زیدی سے)لوڈ شیڈنگ اس وقت پوری قوم کا سب سے اہم مسئلہ بن گئی ہے ،اب یہ اتنی تکلیف دہ صورت اختیار کر گئی ہے کہ اس تکلیف کو الفاظ میں بیان کرنا ممکن نہیں ہے ،زندگی کے تمام شعبوں کو لوڈشیڈنگ کی وجہ سے شدید کوفت کا سامنا ہے۔اس کے باعث کاروبار کو ناقابل تلافی نقصان برداشت کرنا پڑ رہا ہے ہر شخص لوڈ شیڈنگ کو اپنے ناکردہ گناہوں کی سزا مان رہا ہے۔شوبز کے مختلف شعبے بھی ملک میں ہونے والی بدترین لوڈشیدنگ کی وجہ سے بے پناہ تکلیف برداشت کررہے ہیں۔کچھ عرصے لوڈ شیڈنگ نہیں ہوئی اور اب دوبارہ شروع ہوگئی ہے ۔اس حوالے سے شوبز کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والی شخصیات نے جن خیالات کا اظہار کیاہے۔اداکارہ سعدیہ خان نے کہا کہ آج کے دور میں بجلی کے بغیر کوئی بھی کام ممکن نہیں ہے اس کی وجہ سے سٹیوڈیوز اور دیگر مقامات پر ہونے والی فلموںکی شوٹنگز بہت متاثر ہورہی ہیں۔خوشبو نے کہا کہ لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے تھیٹر کا کاروبار بھی تباہ ہورہا ہے بجلی کی بندش کی وجہ سے اے سی بندہوجاتا ہے۔لوگ جب گرمی میں نڈھال ہونگے تو وہ ڈرامہ دیکھنے کیوں آئیں گے۔ اعجاز باجوہ نے کہاکہ ہمارا ملک اس وقت تک ترقی نہیں کرسکتا جب تک یہاںسے لوڈ شیڈنگ کا خاتمہ نہیں ہوجاتا۔ہم نے پوری دنیا میںشوز کئے ہیںچھوٹے سے چھوٹے ملک میں بھی بجلی نہیں جاتی نہ جانے ہم لوگ اس کے خاتمے لئے کیوں سنجیدہ نہیں ہوتے۔کوئل پاکستان حوریہ خان نے کہا کہ لوڈ شیدنگ عذاب الٰہی ہے جو ہمارے گناہوں کے نتیجے میںنازل ہوا ہے۔فیصل قریشی نے کہا کہ جب سے لوڈ شیڈنگ بڑھی ہے ڈراموں کی لاگت میں بے پناہ اضافہ ہوگیا ہے۔جس کی وجہ سے ہمارے لئے معیار کو برقرا ر رکھنا ناممکن ہورہا ہے۔اب یہ مسئلہ ناقابل برداشت ہورہا ہے۔سارا ملک نے کہا کہ اس وقت ہمارا ملک بے شمار مسائل کا شکار ہے ان میںسے سب سے زیادہ تکلیف دہ دہ مسئلہ لوڈشیڈنگ ہے۔ہمارے ملک میں اگر اس کو جلد از جلد ختم کرنا ہے تو فوری طور پر اپنے مفادات بالائے طاق رکھ کر نئے ڈیم بنانا ہونگے۔ اداکارہ سیمی راحیل نے کہا کہ ہم سب مفاد پرست ہیںہمیں ملک سے زیادہ اپنے مفادات سے پیار ہے۔لوڈ شیڈنگ اتنا بڑا مسئلہ نہیں جتنا بڑا ہم نے بنالیاہے۔پوری قوم سراپا احتجاج بنی ہوئی ہے لیکن کسی کے کان پر جوں بھی نہیںرینگ رہی۔کالا باغ ڈیم ہی مسئلے کا واحد اورآخری حل ہے۔بنگلہ دیش کتنا چھوٹا ملک ہے لیکن وہاں پر بجلی نہیں جاتی ہمارے سیاست دان قوم کو سکون کا سانس لیتے ہوئے نہیںدیکھ سکھتے۔پروڈیوسرمحمدنفیس نے کہا کہ لوڈشیڈنگ دہشت گردی سے بڑا مسئلہ بنتی جارہی ہے۔اس کو فوری ختم ہونا چاہیے تاکہ ہمارا پیارا ملک دن دوگنی رات چوگنی ترقی کرے۔بابر علی نے کہاکہ لوڈشیڈنگ کا دکھ بیا ن سے باہر ہے امیرلوگ تو جنریٹر لگا کر گذارا کرلیتے ہیںلیکن غریب پر اس شدید گرمی کے موسم میںجو گذرتی ہے وہ اسے ہی معلوم ہے۔پروڈیوسر ارشد چوہدری نے کہا کہ پورے پاکستان میں کسی بھی تھیٹر میں اتنا پاور فُل جنریٹر نہیں لگا ہوا جو لوڈشیڈنگ کے وقت اے سی چلاسکے جس کی وجہ سے موسم گرما میںڈرامہ دیکھنے والوں کی تعداد کم سے کم ہوتی جارہی ہے مجھ سمیت تھیٹر انڈسٹری سے وابستہ ہر شخص پریشان ہے کہ کہیںلوڈشیڈنگ کی وجہ سے یہ شعبہ بھی بحران کا شکار نہ ہوجائے۔

لوڈ شیڈنگ کے باعث ڈرامے کے بجٹ میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے اگر لوڈ شیڈنگ کا جلد از جلد خاتمہ نہ ہوا تو ہمیںمستقبل کے لائحہ عمل کا فیصلہ کرنا ہوگا ۔اداکارہ زارا اکبرنے کہا کہ لوڈ شیدنگ کے باعث ہر کاروبار تباہی کے دہانے پر پہنچ چُکا ہے یہ جانے ہمارے حکمرانوں کو کب ہوش آئے گا ۔یہ سلسلہ یوں ہی چلتا رہا تو پوری پاکستانی قوم نفسیاتی مریض بن جائے گی۔سینما اونرجہانزیب اقبال نے کہا کہ سینما انڈسٹری کی بدحالی کی ایک وجہ لوڈ شیڈنگ بھی ہے۔لائٹ جانے کے بعد ہمیںجنریٹر چلانا پڑتا ہے جس کی وجہ سے ٹکٹ کی قیمت کم کرنا ممکن نہیںہے۔اس انڈسٹری سے وابستہ بیشمار افراد کا روزگار لوڈشینگ کے باعث ختم ہوسکتا ہے۔اخراجات پورے نہ ہونے کے کی وجہ سے کئی سینما بندپڑے ہوئے ہیں۔اداکار عباس باجوہ نے کہا کہ لوڈشیڈنگ کا خاتمہ اب تو ایک خواب لگتا ہے۔یہ ایک ایسا بھیانک خواب ہے جس کی کوئی تعبیر نہیںہے۔میڈم سنگیتا نے کہا کہ لوڈشیڈنگ تو ختم نہیں ہوگی البتہ ہم ختم ہوجائیں گے۔حاجی عبدالرزاق نے کہا کہ میں تو اب لوڈشیڈنگ کا عادی ہوگیا ہوں۔بجلی آئے یا جائے مجھے اس سے کوئی فرق نہیںپڑتا ۔ہم جب تک ایک قوم بن کر نہیںسوچیں گے تب تک ہمارے مسائل حل نہیں ہونگے۔میکال ذوالفقار نے کہا کہ ہماری صنعت و تجارت لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے برباد ہو چکی ہے۔اس ملک کو لوڈ شیڈنگ نے جو نقصان پہنچایا ہے اس کا ازالہ صدیوں میںبھی ممکن نہیںہے۔پروڈیوسر چنگیز اعوان نے کہ ہم لوگوں کو نہ جانے کب ہوش آئے گا لوڈشیڈنگ کی وجہ سے سینما انڈسٹری تباہی کا شکار ہورہی ہے۔اداکارہ وپرفارمر صائمہ خان نے کہا کہ اس وقت مُلک میں اتنی زیادہ لوڈشیڈنگ جاری ہے کہ لوگ مظاہروں پر مجبور ہوگئے ہیں۔پرویز کلیم نے کہا کہ دہشت گردی اور لودشیڈنگ دونوں کا خاتمہ ضروری ہے مجھے امید ہے کہ ہمارے حکمران جلد ان مسائل پر قابو پا لیں گے۔اداکارہ رز کمالی نے کہا کہ کراچی میں لوڈ شیڈنگ نے ہماری ریکارڈنگزکے شیدول کو اتنا متاثر کیا ہے کہ بیان سے باہر ہے۔ڈائریکٹر سید فیصل بخاری نے کہا کہ جو ڈرامہ 40دن میں بنتا تھا وہ اب دو دو مہینے میں بن رہا ہے جس کی وجہ سے پروڈکشن کاسٹ بہت بڑھ گئی ہے۔پروڈیوسر ارشد چوہدری نے کہا کہ لوڈشیڈنے کے عذاب کو پورے پاکستان نے اپنی لپیٹ میں لیا ہوا ہے۔قیصر ثناءاللہ نے کہا کہ میں نے دنیا کے کئی ممالک میں شوٹنگ اور ریکارڈنگ کی ہوئی ہے مجھے کسی بھی مُلک میں بجلی کا بحران نظر نہیں آیا ہمارے مُلک میں جتنی بجلی جاتی ہے اُس کی مثال کہیں نہیں ملتی۔اداکارہ وپرفارمر ماہ نورنے کہا کہ میرے خیال میں لوڈ شیدنگ کا خاتمہ قیامت کے دن ہی ہوگا اس سے قبل ہمارے مُلک میں اس کا خاتمہ ممکن نظر نہیں آتا۔میگھا نے کہا کہ ہمارا مُلک لوڈشیدنگ کی وجہ سے مسلسل تنزلی کی جانب گامزن ہے اور ہمارے سیاستدان اپنی اپنی لڑائیوں میں مصروف نظر آتے ہیں سب کو کرسی پیاری ہے کسی کو وطن سے پیار نہیں ہے۔

مزید : کلچر