کشکول کو توڑنے میں مشکلات کا سامنا ہے

کشکول کو توڑنے میں مشکلات کا سامنا ہے
کشکول کو توڑنے میں مشکلات کا سامنا ہے

  

                   کراچی (اے این این)صدر مملکت ممنون حسین نے کہا کہ ماضی کی غلط پالیسیوں کی وجہ سے کشکول توڑنے میں مشکلات کا سامنا ہے،عوام ایسے عناصر کو مسترد کردیں جو حکومت کو غیر مستحکم کرنے میں مصروف عمل ہیں ،خواتین کا تعلیم کے فروغ میں کلیدی کردار ،پرائمری تعلیم کا مکمل شعبہ خواتین کے پاس ہونا چاہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہاکہ حکومت ملکی معیشت کو مستحکم کر رہی ہے ،انرجی کے بحران پر قابو پایا جارہا ہے ،ایسے عناصر کو عوام مسترد کردیں جو حکومت کو غیر مستحکم کرنے میں مصروف با عمل ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ماضی کی غلط پالیسیوں کی وجہ سے کشکول توڑنے میں مشکل کا سامنا ہے ،تاہم حاصل کیے گئے قرضے ملکی معیشت اور انرجی کے بحران ،دیگر منصوبوں میں شفافیت کیساتھ استعمال کیے جارہے ہیں ،جس سے ملکی معیشت بہتر ہورہی ہے ،صدر مملکت نے کہا کہ کراچی پاکستانی معیشت کا حب ہے ،امن و امان کا قیام وفاقی اور صوبائی حکومت کی مشتر کہ ذمہ داری ہے ،شہر قائد کے مسائل کو حل کرنا ہماری اولین ترجیحات میں ہے ،صدر مملکت نے ملک میں تعلیم کے فروغ کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ اس سلسلے میں خواتین بہتر انداز سے کردار ادا کرسکتی ہیں ،پرائمری تعلیم کا مکمل شعبہ خواتین کے پاس ہونا چاہے ،انہوں نے کہا کہ ملک کا تعلیمی نظام پاکستانی اسلام اساس اور نظریہ پاکستان کے مطابق ہونا چاہیے ،اس سلسلے میں جہاں حکومت فروغ تعلیم کے لیے بجٹ میں فنڈ مختص کرے وہاں تعلیمی نصاب میں بڑی تبدیلیوں کی بڑی ضرورت ہے ۔

مزید : صفحہ اول