الطاف حسین کو شناختی کارڈ کے اجراءکیلئے سندھ اسمبلی کے احاطے میں ایم کیو ایم کا احتجاج

الطاف حسین کو شناختی کارڈ کے اجراءکیلئے سندھ اسمبلی کے احاطے میں ایم کیو ایم ...

                              کراچی(این این آئی)متحدہ قومی موومنٹ(ایم کیوایم ) کے ارکان سندھ اسمبلی نے الطاف حسین کو شناختی کارڈ نہ ملنے کے خلاف ہفتہ کوسندھ اسمبلی کے احاطے میں احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے وزیر اعظم سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔قبل ازیں متحدہ قومی موومنٹ کا سندھ اسمبلی بلڈنگ میںپارلیمانی اجلاس ہوا جس میں سندھ اسمبلی کے صوبائی مشیر فیصل سبزواری، صوبائی وزراءروف صدیقی اور ڈاکٹر صغیر احمد،سندھ اسمبلی میں ایم کیوایم کے پارلیمانی لیڈرسید سرداراحمد سمیت دیگرارکان سندھ اسمبلی نے شرکت کی ۔اجلاس میں الطاف حسین کو شناختی کارڈ اور پاسپورٹ نہ جاری کرنے کے معاملے پر غورکیاگیاجبکہ شناختی کارڈ اور پاسپورٹ جاری نہ کرنے کی مذمت بھی کی گئی ۔اجلاس کے بعد ارکان نے اسمبلی کے احاطے میں احتجاجی مظاہرہ کیا، اس موقع پرمظاہرین نے پلے کارڈز اٹھارکھے تھے جس پر الطاف حسین کو شناختی کارڈ اور پاسپورٹ کے اجرا کے مطالبات اور وفاقی وزیر داخلہ کے خلاف نعرے درج تھے۔جبکہ احتجاجی شرکاءمسلسل نعرے بازی بھی کررہے تھے ۔احتجاجی شرکاءکا مطالبہ تھاکہ متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین کو فوری شناختی کارڈ جاری کیا جائے اور نادرا کے معطل عملے کو بحال کیا جائے۔ احتجاجی شرکاءسے خطاب کرتے ہوئے ایم کیو ایم کے رہنما فیصل سبزواری نے کہا کہ جن کا منصب ذمہ داری تھا انہوں نے غیر ذمہ داری دکھائی۔ انہوں نے کہاکہ کروڑوں لوگوں کے محبوب قائد سے شناختی کارڈ اور پاسپورٹ کے لئے اس طرح رویہ ہے تو عام آدمی سے کیا ہوگا۔فیصل سبزواری نے مزید کہا کہ وفاقی وزیر داخلہ کو چاہیئے کہ وہ اپنے عہدے کی مناسبت سے بڑے پن کا مظاہرہ کریں۔ کیا انہیں یاد نہیں کہ کون سے ایسے عناصر تھے جنہوں نے اسلام آباد کچہری واقعے پر غلط بریفنگ دی تھی۔ وزیر اعظم اسلام آباد میں بیٹھ کر اس معاملے پر پانی ڈالیں آگ نہ بڑھائیں، انہوں نے کہا کہ اس معاملے پر ایم کیو ایم ہر فورم پر اپنا احتجاج ریکارڈ کرارہے ہیں۔ ہم وزیر اعظم اور وفاقی وزیرداخلہ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ جس نے بھی زیادتی کی ہے اس کے خلاف کارروائی کی جائے۔فیصل سبزواری نے کہا ہے کہ ایسے شخص کے بارے میں غیرذمہ داری کا مظاہرہ کیا گیا، جن کے کروڑوں چاہنے والے ہیں۔صوبائی وزیر صنعت عبدالرف صدیقی نے اپنے خطاب میں کہاکہ نائیکوپ اور پاسپورٹ کے اجرا کے لئے کسی بھی درخواست گزار کا ڈیٹا ایک نظام کے تحت آگے بڑھتا ہے، وزارت خارجہ نے بذات خود اعترف کیا کہ انھیں ڈیٹا موصول ہوا، وزیرداخلہ کو معاملات کا علم نہیں اور بول رہے ہیں، انھوں نے اپنے الفاظ میں الطاف حسین کا مذاق اڑایا۔انہوں نے کہاکہ یہ نان ایشو نہیں الطاف حسین کا حق ہے، اس معاملے میں وزارت داخلہ نے بدترین نااہلی دکھائی ہے۔ وزیرداخلہ چوہدری نثار آج تک جھوٹ بولتے آرہے ہیں اور ان کے جو منہ میں آرہا ہے وہ بول دیتے ہیں

مزید : صفحہ اول