سعودی عرب کے ساتھ اتنی گہری دوستی؟مصری حکومت نے معمولی بات پر بڑا اقدا م کر کے ثبوت دے دیا

سعودی عرب کے ساتھ اتنی گہری دوستی؟مصری حکومت نے معمولی بات پر بڑا اقدا م کر ...
سعودی عرب کے ساتھ اتنی گہری دوستی؟مصری حکومت نے معمولی بات پر بڑا اقدا م کر کے ثبوت دے دیا

  

قاہرہ (نیوز ڈیسک) روایتی عرب لباس میں ملبوس سعودی شخص کو ریسٹورنٹ میں داخلے کی اجازت نہ دینے پر مصری حکام نے نہ صرف ریسٹورنٹ مالک کے خلاف سخت کارروائی کا اعلان کیا ہے بلکہ ریسٹورنٹ بند کردیا گیا ہے اور مالک کو معافی مانگنے کا حکم بھی دیا گیا ہے۔

مزیدپڑھیں:10 پاکستانیوں کا گروہ عرب ملک میں پکڑ اگیا

اخبار ”الوطن“ کے مطابق سعودی شخص نے روایتی لباس ’توب‘ پہن رکھا تھا جس کی وجہ سے ایک ریسٹورنٹ میں اسے داخلے کی اجازت نہ دی گئی۔ اس واقع کے متعلق بات کرتے ہوئے مصر کے وزیر سیاحت خالد رامی نے مقامی میڈیا کو بتایا کہ سعودی شخص کو ریسٹورنٹ میں داخلے کی اجازت نہ دینے پر منتظمین کے خلاف تحقیقات کی جارہی ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ریسٹورنٹ کی انتظامیہ کے ساتھ نرمی نہیں برتی جائے گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ ایک الگ تھلگ واقعہ تھا، جو کہ مصریوں کے عربی بھائیوں کے استقبال کے طریقے کا عکاس نہیں ہے۔

مقامی میڈیا میں یہ رائے بھی سامنے آئی ہے کہ مصر سیاحوں کی تعداد میں غیر معمولی کمی سے پریشان ہے اور مالدار عربوں کی زیادہ سے زیادہ تعداد کو اپنی طرف مائل کرنے کے لئے غیر معمولی اقدامات کے لئے بھی تیار ہے، یہی وجہ ہے کہ ریسٹورنٹ کی انتظامیہ کے خلاف انتہائی سخت مﺅ قف سامنے آیا ہے۔

مزید : بین الاقوامی