پاکستانی والدین نے اپنی 11 سالہ بیٹی کا 65 سالہ بزرگ سے نکاح کروادیا کیونکہ اس کی ۔ ۔ ۔ وجہ ایسی کہ جان کر ہرشہری افسردہ ہوجائے

پاکستانی والدین نے اپنی 11 سالہ بیٹی کا 65 سالہ بزرگ سے نکاح کروادیا کیونکہ اس ...
پاکستانی والدین نے اپنی 11 سالہ بیٹی کا 65 سالہ بزرگ سے نکاح کروادیا کیونکہ اس کی ۔ ۔ ۔ وجہ ایسی کہ جان کر ہرشہری افسردہ ہوجائے

  

راجن پور(ویب ڈیسک) جام پور کے نواحی علاقہ کوہ سلیمان کے دامن میں واقع ہڑند میں اکیسویں صدی کے اس دور جدید میں بھی جہالت کی قبیح رسم وٹہ سٹہ کی انتہا کر دی گئی ،باپ نے اپنی گیارہ سالہ لخت جگر کا نکاح 65سالہ شخص کے ساتھ کرد یا۔ اطلاع ملنے پر پولیس تھانہ ہڑند نے رخصتی کو ناکام بنا دیا دولہا او ر لڑکی کے والد کو گرفتار کر کے مقدمہ بھی درج کر دیا گیا۔

روزنامہ خبریں کے مطابق علاقہ ہڑند میں وٹہ سٹہ کے قبیح و فرسودہ رسم کے تحت باپ نے اپنی 11سالہ بیٹی کا نکاح 5روز قبل 65سالہ شخص کے ساتھ طے کر وایا تھا جس کی رخصتی کی اطلاع پر تھانہ ہڑند پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے موقع پر پہنچ کر دولہا اور لڑکی کے والد کو گرفتار کر کے 6افراد کے خلاف مقدمہ درج کر دیا مقدمہ میں نکاح خواں بھی شامل ہے جبکہ دھمکی اور کم عمری کی زبردستی شادی کرنے کی دفعات بھی ایف آئی آر میں شامل کی گئی ہیں۔

ذرائع کے مطابق لڑکی کے والد چاکر ولد اللہ رکھا قومی کلیری سکنہ کرکتہ وزیری نے اپنی کم عمر بیٹی فرزانہ مائی بعمر 11سال کا شرعی نکاح 5، 6روز قبل مٹھو ولد اللہ بخش قوم کلیری کے ساتھ کر دیا تھا اور اس کے گواہان میں ہزارہ ، مزارہ‘ مرید حسین اور نکاح خواں حافظ نیہال سکنہ تل شمالی نکاح خواں کے گھرپر موجود تھے اور فرزانہ بی بی کی زبر دستی رخصتی کررہے تھے دھمکی دی کہ اگر تم نے انکار کیا تو تمہیں ما ر دیں گے اطلا ع پر ایس ایچ او تھانہ ہڑند و تفتیشی افسر ٹی اے ایس آئی جاوید احمد موقع پر پہنچے جنہوں نے لڑکی برآمد کرکے دولہااور ملوث ملزمان کو گرفتار کرلیا۔

مزید : علاقائی /پنجاب /راجن پور