گلگت بلتستان میں انتخابات کے انعقاد،نگران حکومت کی تشکیل کیلئے صدارتی حکم جاری

  گلگت بلتستان میں انتخابات کے انعقاد،نگران حکومت کی تشکیل کیلئے صدارتی حکم ...

  

گلگت(این این آئی) صدر مملکت عارف علوی نے گلگت بلتستان میں نگران حکومت کی تشکیل اور وہاں الیکشنز ایکٹ 2017 میں توسیع کے لیے حکم جاری کردیا۔وزارت برائے امور کشمیر اور گلگت بلتستان سے جاری نوٹی فکیشن کے مطابق صدر نے شفاف انتخابات کے انعقاد کے لیے 'گلگت بلتستان الیکشن اینڈ کیئر ٹیکر امینڈمنٹ آرڈ، 2020' نافذ کردیا۔ نجی ٹی وی کے مطابق گلگت بلتستان اسمبلی کی 5 سالہ مدت رواں برس 24 جون کو مکمل ہوجائے گی۔صدراتی حکم میں کہا گیا کہ شفاف اور منصفانہ انتخاب کے انعقاد کے لیے گلگت بلتستان میں نگران حکومت بنانے کے لیے قوانین فراہم کرنا ضروری تھا۔یہ گورنمنٹ آف گلگت-بلتستان آرڈر 2018 ایس آر نمبر 2018، (1)704 کی ترمیم کے لیے فائدہ مند ہے۔یہ آرڈر گلگت-بلتستان (الیکشنز اینڈ کیئر ٹیکر گورنمنٹ) امینڈمنٹ آرڈر2020 کہلائیگا، صدراتی حکم کے ذریعے اس میں نیا آرٹیکل 48- اے شامل کیا گیا ہے۔صدارتی حکم میں کہا گیا کہ حکومت گلگت-بلتستان کے آرٹیکل-48 کے بعد نیا آرٹیکل شامل کیا جائے گا۔الیکشنز ایکٹ 2017 کے تحت پاکستان میں نافذ تمام قوانین گلگت-بلتستان میں بھی اپنائیں جائیں گے۔ اس میں کہا گیا کہ مجوزہ گلگت-بلتستان ریفارمز، 2019 کے آرٹیکل (5)56 کے تحت گلگت- بلتستان کے وزیراعلیٰ، اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اور وفاقی وزیر برائے امور کشمیر اور گلگت-بلتستان کو نگران وزیراعلی کے لیے ایک یا اس زائد ناموں پر متفق ہونا چاہیے۔صدارتی حکم نامے میں کہا کہ اگر اس آرڈر کی کسی شق کو عملی شکل دینے میں مشکل پیش آتی ہے تو صدرِ پاکستان آفیشل گزیٹ میں نوٹیفائی کرتے ہوئے ایسے دفعات بناسکتے ہیں جو وہ مشکل کختم کرنے کے لیے مناسب سمجھیں۔مزید برآں پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی) کے صدر برائے گلگت-بلتستان ریٹائرڈ جسٹس سید جعفر شاہ نے کہا کہ علاقے میں نگران حکومت کی تشکیل کے لیے کوئی شق موجود نہیں تھی تاہم صدارتی حکم کے بعد تمام مشکلات ختم ہوگئی ہیں۔انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان اسمبلی کے انتخابات وقت پر ہوں گے، انہوں نے کہا کہ نگران حکومت 2 ماہ کے اندر انتخابات کروائے گی اور مخصوص حالات میں نگران حکومت کی مدت میں توسیع کا قانون بھی موجود ہے۔

صدارتی حکمنامہ

اسلام آباد(این این آئی) گورنر گلگت بلتستان راجہ جلال حسین مقپون نے کہا ہے کہ ہ گلگت بلتستان میں آنے والے انتخابات میں غیر جانبدار نگران حکومت کے ذریعے صاف و شفاف انتخابات کو یقینی بنا کر آنے والی نسلوں کے لیے مثال قائم کر یں گے،موجودہ ن لیگ کی حکومت کی مدت ختم ہونے میں ایک ماہ باقی ہے مگر آج تک علاقے کی وسیع تر مفاد میں وفاقی حکومت اور گورنر آفس نے صوبائی حکومت کے جائز و قانونی معاملات میں کوئی رکاوٹ نہیں ڈالی۔ ایک بیان میں گورنر گلگت بلتستان نے کہاکہ وفاق نے صوبائی حکومت کی بھرپور مدد کرتے ہوئے نہ صرف مالی امداد فراہم کیا ہے بلکہ حالیہ کورونا کی وبائی مرض کے دوران بھرپور امداد بھی فراہم کررہاہے۔ راجہ جلال حسین مقپون کاگلگت بلتستان میں انتخابات اور نگران حکومت کے قیام کیلئے صدر کی جانب سے جاری کردہ آرڈر 2020کے بارے میں کہنا تھا کہ اس ترمیمی آرڈر کے ذریعے گلگت بلتستان میں موجودہ حکومت کی مدت مکمل ہونے کے بعد غیر جانبدار نگران حکومت کا قیام عمل میں لایا جائے گا، گلگت بلتستان میں صاف و شفاف انتخابات کو یقینی بنانے کے لیے بھرپور کردار ادا کریں گے۔

گورنر بلتستان

مزید :

صفحہ اول -