دو خواتین قتل‘حادثات میں 3ہلاکتیں‘2خودکشیاں‘گھروں میں کہرام

دو خواتین قتل‘حادثات میں 3ہلاکتیں‘2خودکشیاں‘گھروں میں کہرام

  

کچا کھوہ،میلسی، قصبہ کالا، ہیڈ پنجند، بہاولنگر، رحیم یار خان(بیورورپورٹ، نمائندگان پاکستان) غیرت کے نام پر خاتون قتل کردی گئے۔تفصیلات کے مطابق کچاکھوہ کے نواحی علاقہ 33دس آر میں گزشتہ رات گل بانو باعمر 37سال گھر میں موجود تھی کہ خان بیگ اور ربنواز گھر میں داخل ہو گئے اور آتے ہی سوئی ہوئی خاتون(بقیہ نمبر35صفحہ6پر)

کو بندوق سے فائرنگ کرکے قتل کر دیا اور موقع سے فرار ہوگئے جبکہ اطلاع پاکر مقامی پولیس موقع واردات پر پہنچ گئی اور نعش کو پوسٹ مارٹم کے بعد خاتون کے والد گہنا کی مدعیت میں زیر دفعہ 302 کے تحت 3افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا تاحال ملزمان کی گرفتاری عمل میں نہ لائی گئی ہے۔ جبکہ نامعلوم تیز رفتار کار نے ایک لڑکے کو روند ڈالا جس کے نتیجے میں وہ جاں بحق ہو گیا بتایا جاتا ہے کہ نورشاہ کا رہائشی عبدالرحمن کا12سالہ بیٹا اسد سڑک پرجاریا تھا کہ نامعلوم کار ڈرائیور نے اسے کار تلے کچل دیا جو موقع پر جاں بحق ہوگیا۔ادھر ٹرالر اور موٹر سائیکل کے درمیان تصادم سے موٹر سائیکل سوار نوجوان موقع پر جانبحق،ٹرالر ڈرائیور گرفتاراور گاڑی پولیس حراست میں،پولیس نے مزید کاروائی شروع کر دی،۔تفصیلات کے مطابق بستی دُورہٹہ کا رہائشی حافظ محمد جمیل نتھوانی اپنے بھائی کے ہمراہ موٹرسائیکل پر شادن لُنڈ روڈ کے کنارے کھڑا تھا کہ پیچھے سے آنے والے ٹرالر نمبری 2325پشاورنے اسے کچل دیا جس کے نتیجہ میں محمد جمیل موقع پر جاں بحق ہوگیا جبکہ چھوٹا بھائی معجزانہ طور پر بچ گیا ڈالر ڈرائیور گاڑی سمیت جائے حادثہ سے فرار ہوکر ایک کلومیٹر کے فاصلہ پر گاڑی کھڑی کر کے بھاگنے کی کوشش کی مگر پولیس نے اسے گرفتار کر لیا ڈالر کو قبضہ میں لے کر کاروائی شروع کر دی اور نعش کو RHCشادن لُنڈمنتقل کر دیا گیا جہاں ورثا ء نعش کے ہمراہ دوگھنٹے تک ہسپتال میں انتظار کرتے رہے تاہم کوئی ڈاکٹر موقع پر نہ آیا تاہم گھر میں بیٹھ کر مریض کو ڈسٹرکٹ ہسپتال پوسٹ مارٹم کیلئے احکامات دیتے رہے جس کے بعد نعش کو پرائیویٹ گاڑی پر اس کے گھر منتقل کر دیا گیا۔جبکہ پٹھے رکشہ نے موٹرسائیکل سوار کو ٹکرمار دی جبکہ موٹرسائیکل سوار موقع پر جاں بحق ہوگیا۔ تفصیل کے مطابق گزشتہ روز عبدالغفارگوپانگ موٹرسائیکل پر کام کے سلسلے میں جارہاتھا کہ جب تھہیم والا چوک پرپہنچا توپٹھہ رکشہ نے ٹکر دے ماری جس سے موٹرسائیکل سوار عبدالغفارکی سرمیں شدید چوٹ لگی جوکہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے موقع پر ہی دم توڑگیا۔نامعلوم پٹھہ رکشہ ڈرائیور فرارہوگیا۔متوفی عبدالغفار گوپانگ پولٹری فارم پر گاڑی کی ڈرائیوری کرتا تھا۔علاوہ ازیں رفیع گارڈن کے نزدیک 2 نامعلوم موٹر سائیکل سواروں نے لڑکی کو پیچھے سے آتے ھوئے فائر مار دیا فائرنگ کے نتیجے میں 25 سالہ ث نامی لڑکی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ڈسٹرکٹ ہسپتال میں دم توڑ گئی۔پولیس کے مطابق ث نامی لڑکی اپنے بھائی کے ساتھ موٹرسائیکل پر گھر کی طرف جارہی تھی۔موٹرسائیکل پر سوار نامعلوم نے فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں 25 سالہ لڑکی کو تشویشناک حالت میں ڈسٹرکٹ ہسپتال منتقل کردیا گیا۔شدید زخمی ث ڈسٹرکٹ ہسپتال میں جان کی بازی ہار گئی مقامی پولیس نے موقع پر پہنچ کر قانونی کاروائی کرتے ہوئے لڑکی کے والد کی درخواست پر مقدمہ درج کر لیا ایس ایچ او سیف اللہ حنیف نے کہا کہ پولیس قانون کے مطابق اپنی ذمہ داری ادا کرتے ہوئے مقتولہ کو انصاف دلانے میں اپنا کردار ادا کریگی۔دریں اثناء گھریلوں جھگڑوں اور مالی پریشانیوں سے دلبرداشتہ ہوکر 2 افراد نے گندم میں رکھنے والی گولیاں کھا کر خود کشی کر لی 7 کا اقدام خود کشی ہسپتال منتقل،تفصیل کے مطابق چک 100 کے رہائشی 20 سالہ محمد علی اور نواں کوٹ کے رہائشی 25 سالہ محمد بلال نے آ? روز کے گھریلو جھگڑوں اور مالی پریشانیوں سے دلبرداشتہ ہوکر گندم میں رکھنے والی گولیاں کھا لی حالت غیر ہونے پرورثاء نے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں طبی امداد کے باوجود دونوں افراد جانبر نہ ہو پا? اور دم توڑ گئے جبکہ اقدام خودکشی کرنے والے 7 افراد جن میں ٹبی لاڑاں کی 18 سالہ رخسانہ بی بی میر پور ماتھلیو کی 32 سالہ شبانہ بی بی فتح پور کمال کی 22 سالہ اقصٰی بی بی بدلی شریف کی 22 سالہ ثمرین بی بی خانبیلہ کی 22 سالہ زاہدہ بی بی چک 88 کا 40 سالہ غلام مصطفی اور راجن پور کا رہائشی 25 سالہ منیر احمد کو ہسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔

حادثات

مزید :

ملتان صفحہ آخر -