افغانستان میں بزدلانہ اور بے رحمانہ حملے کی پر زور الفاظ میں مذمت

    افغانستان میں بزدلانہ اور بے رحمانہ حملے کی پر زور الفاظ میں مذمت

  

ہنگو (بیورو رپورٹ) افغانستان میں بزدلانہ اور بے رحمانہ حملے کی پر زور الفاظ میں مزمت کرتا ہوں، حملے میں معصوم جانوں کی ضیاع مسلمانوں کے لئے انتہائی دکھ اور افسوس کا مقام ہے۔عالمی دنیا کے تنظیمیں اس بے رحمانہ حملے پر خاموشی سوالیہ نشان ہے۔ عالمی دنیا کو صرف مزمتی بیان پر اکتفا نہیں کرنا چاہئیے۔ ان خیالا ت کا اظہار خیبر پختونخواہ یوتھ اسمبلی کے سپیکرعمر خٹک نے ہنگو کے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ ماہ رمضان المبارک کے مہینے میں افغانستان میں مسلمانوں اور پختونوں پر اس طرح حملے کی جتنی بھی مزمت کی جائے کم ہے، حملے میں اُن معصوم اور فرشتہ صفت بچوں کی شہادت بھی ہوئی ہے جووالدین کے دلو ں کے ٹکڑے تھے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا میں جہاں جہاں بھی ظلم ہو رہا ہے اس میں صرف مسلمانوں کو ہی نقصان پہنچایا جا رہا ہے اور ایسے بزدلانہ حملے اُن دشمن عناصر کی کاروائیاں ہے جو افغانستان میں امن و امان کا قیام نہیں دیکھ سکتے اور پاکستان اور افغانستان کے مسلمانوں کو آپس میں لڑانا چاہتے ہیں۔سپیکر عمر خٹک نے کہاکہ ہیومن رائٹس تنظیمیں، اسلامی تنظیم او آئی سی اور دنیا کے دیگر انسانی حقوق کے علمبردار تنظیموں سے اس بے رحمانہ بزدلانہ اور انسانی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -