قومی اسمبلی میں فلسطین کے حق میں متفقہ قرارداد ، راجہ پرویز اشرف  نے ایوان میں بڑی کمی کی نشاندہی کردی

قومی اسمبلی میں فلسطین کے حق میں متفقہ قرارداد ، راجہ پرویز اشرف  نے ایوان ...
قومی اسمبلی میں فلسطین کے حق میں متفقہ قرارداد ، راجہ پرویز اشرف  نے ایوان میں بڑی کمی کی نشاندہی کردی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنماء اور سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف نے کہاہے کہ اسرائیلی بربریت پر حکومتیں کب تک خاموش رہیں گی؟اب شاید وقت آچکا ہے ہمیں تقریروں، قراردادوں سے آگے بھی سوچنے کی کوشش کرنی چاہیئے ، آج وزیراعظم کا ایوان میں موجودہ ہونا بہت ضروری تھا ۔

قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے راجا پرویز اشرف نے کہا کہ فلسطینیوں سے 1948 سے جو سلوک روا رکھا جارہا ہے وہ کسی سے پوشیدہ نہیں ہے، آج فلسطینیوں کے ساتھ اظہار یکجتی کرنے کے لیئے قرارداد لے کر آرہے ہیں، آج وزیراعظم کا ایوان میں موجودہ ہونا بہت ضروری تھا،افسو س سےکہناپڑتاہے کہ وزیراعظم آج ایوان سے غیرحاضر ہیں،وزیر اعظم کو قوم کے جذبات اور احساسات کی ترجمانی کرنی تھی،فلسطین پر قرار دار کے وقت وزیر اعظم کیوں موجود نہیں؟ہمیں اپنے رویوں پر بھی غور کرنا پڑے گا ۔

راجہ پرویزاشرف نے کہا کہ کشمیریوں پر آج عرصہ حیات تنگ کیا جاچکا ہے،10سالہ فلسطینی بچی نےظلم و جبر کی داستان کو دنیا کے سامنے آشکار کردیا، اب شاید وقت آچکا ہے ہمیں تقریروں، قراردادوں سے آگے بھی سوچنے کی کوشش کرنی چاہیئے ، اس وقت بھی غزہ میں بمباری ہو رہی ہے،پیپلزپارٹی فلسطین کے عوام کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑی ہے۔

مزید :

قومی -