فلسطین کی حمایت سے پیچھے نہیں ہٹ سکتے: اردوان

  فلسطین کی حمایت سے پیچھے نہیں ہٹ سکتے: اردوان

  

 انقرہ (مانیٹرنگ  ڈیسک) ترک صدر رجب طیب اردوان نے کہا ہے کہ فلسطین کی حمایت سے پیچھے نہیں ہٹ سکتے۔ اسرائیل کی حمایت کرنے پر جو بائیڈن کے ہاتھ فلسطینیوں کے خون سے رنگے ہوئے ہیں۔فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کی رپورٹ کے مطابق قوم سے خطاب کرتے ہوئے ترک صدر نے کہا کہ اسرائیل کی حمایت کرنے پر جو بائیڈن کے ہاتھ خون سے لال ہیں، بائیڈن اپنے خون آلود ہاتھوں سے تاریخ لکھ رہا ہے، امریکا نے اپنے رویہ سے ہمیں یہ کہنے پر مجبور کیا، ہم فلسطین کی حمایت سے پیچھے نہیں ہٹ سکتے۔اے ایف پی کے مطابق امریکی صدر جوزف بائیڈن کے جنوری 2021ء   میں وائٹ ہاؤس سنبھالنے کے بعد ترک صدر کی طرف سے ان پر سخت الفاظ کے ذریعے تنقید کی گئی ہے۔اے ایف پی کے مطابق گزشتہ چند ماہ کے دوران رجب طیب اردوان امریکی انتظامیہ اور یورپی اتحادیوں کے ساتھ اپنے تعلقات معمول پر لانے کیلئے کوششوں میں مصروف ہیں۔قوم سے خطاب کے دوران ترک صدر رجب طیب اردوان نے کہا کہ امریکی صدر جوزف بائیڈن اپنے خون آلود ہاتھوں سے تاریخ لکھ رہا ہے، امریکی صدر کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آپ نے ہمیں یہ سب کہنے پر مجبور کیا لیکن اب ہم مزید خاموش نہیں رہ سکتے۔ ترک صدر رجب طیب اردوان نے پوپ فرانسس سے فون پر رابطہ کیا ہے جس میں غزہ کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔دفتر ترک صدر کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ ترک صدر نے پوپ فرانسس سے فلسطینیوں کے قتل عام رکوانے میں مدد پر زور دیا۔ترک صدر نے  پوپ فرانسس سے فلسطینیوں کے قتل عام پر اسرائیل پر پابندیاں لگانے پر بھی زور دیا۔ترک صدر نے کہاکہ جب تک عالمی برادری اسرائیل پر پابندیاں نہیں لگاتی فلسطینی قتل عام کا نشانہ بنے رہیں گے۔

ترک صدر  

مزید :

صفحہ اول -