انڈونیشیا، کشتی حادثہ کے بعد  لاپتہ 9 افراد کی لاشیں برآمد

انڈونیشیا، کشتی حادثہ کے بعد  لاپتہ 9 افراد کی لاشیں برآمد

  

جکارتہ(شِنہوا)انڈونیشیا کے وسطی صوبے جاوا کے ضلع بویولالی میں کیدونج امبو آبی ذخیرے میں کشتی حادثہ کے بعد لاپتہ ہونیوالے 9 افراد مردہ حالت میں ملے ہیں۔بویولالی کی آفات انتظامیہ ایجنسی شعبہ ہنگامی حالات کے سربراہ کرنیاوان فجر پراسیتیو نے پیر کے روز بتایا کہ 9 متاثرین میں سے باقی رہ جانیوالے 2  متاثرہ افراد کی لاشیں بھی تلاش و بچا ؤٹیم نے تلاش کر لی ہیں جن کی شناخت بالترتیب اتوار کی شام اور پیر کے روز صبح کے وقت ہوئی ہے۔انتارا نیوز ایجنسی نے پراسیتیو کے حوالے سے بتایا کہ آخری 2 متاثرین کو مزید شناخت کیلئے 2 مقامی ہسپتالوں میں منتقل کر دیا گیا ہے۔ہفتے کے روز مقامی وقت کے مطابق صبح تقریبا 11 بجے آبی ذخیرے میں ایک کشتی ڈوبنے کی اطلاع موصول ہوئی تھی جس میں 20 مقامی سیاح سوار تھے۔بویولالی ضلع کی پولیس کے سربراہ معاون کمشنر کہیو نوگروہو کے مطابق یہ حادثہ اس وقت پیش آیا جب کشتی سیاحوں کو ایک تیرتے ہوئے ریستوران میں لیکر جا رہی تھی۔نوگروہو نے کہا کہ بدقسمت کشتی پر سوار 20 مسافروں میں سے 11 افراد اس حادثے میں بچ گئے اور 9 کی موت ہو گئی۔

کشتی حادثہ

مزید :

صفحہ آخر -