کچہ میں 40سال سے جرائم پیشہ عناصر کا راج، آپریشنز پر سوالیہ نشان

کچہ میں 40سال سے جرائم پیشہ عناصر کا راج، آپریشنز پر سوالیہ نشان

  

  روجھان (نمائندہ پاکستان) تھانہ بنگلہ اچھا اور تھانہ سونمیانی  کی حدود  کچے میں چالیس سال سے جرائم پیشہ افراد کی پناہ گاہیں قائم ہیں ا یل ایم جی راکٹ لانچر سے لیس جرائم پیشہ افراد سے ناصرف مقامی افراد خوف زردہ بلکہ تھانوں میں بیھٹے پولیس کے جوان بھی کاپنتے (بقیہ نمبر13صفحہ6پر)

ہیں تھانہ بنگلہ اچھا اور سونمیانی کی حدود  میں قابل ایس ایچ اوز تعنیات نہ ہوسکے   تفصیل کے مطابق تھانہ بنگلہ اچھا اور تھانہ سونمیانی کی حدود کچے  میں چالیس سال سے جرائم پیشہ افراد نے زمین دوز پناہ گاہیں بنا رکھی ہیں ایل ایم جی راکٹ لانچر سمیت جدید اسلحہ سے لیس یہ جرائم پیشہ افراد رحیم یار خان صادق آباد بہاولپور خان پور ملتان سمیت ملک کے کء شھروں میں اغواء  قتل ڈکیتی بھتہ وصولی کی واردات کرتے ہیں اور تھانہ سونمیانی اور تھانہ بنگلہ اچھا کی حدود میں  کچے کے اندر  پناہ گزین ہوتے ہیں بدقسمتی سے نئے ایس ایچ اوز اور انکی نفری سمیت تھانہ بنگلہ اچھا اور تھانہ سونمیانی ان جرائم پیشہ افراد کو نتھ ڈالنے کے لیے کوئی سرمہ جرات مند ایس ایچ اوز تعنیات نہ ہوسکا گشت کا نظام موثر اور مظبوط نہ ہونے کے باعث جرائم پیشہ افراد کچے میں دندناتے پھرتے ہیں  پولیس اور قانون نافذ کرنیوالوں اداروں کی ناقص پالسیوں کے باعث جرائم پیشہ افراد سے ناصرف مقامی افراد بلکہ تھانوں میں بیٹھے پولیس کے جوان بھی خوفزداہ ہیں جبکہ تھانوں میں بیٹھے ایس ایچ اوز جرائم پیشہ افراد سے لڑنے اور قانونی رٹ قائم کرنے کی بجائے اس امید میں بیٹھے ہیں کہ سیاسی قیادت جرائم پیشہ افراد سے مزاکرات کرکے امن وامان کا حل نکالے ایم این اے سردار ریاض محمود مزاری نے وزیراعظم عمران خان وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار اور قومی اسمبلی میں سرکل بنگلہ اچھا کی حدود کچے  میں پناہ گزین  جرائم پیشہ افراد کو منطقی انجام تک پہچانے کے لیے آواز بلند کی مگر پولیس اور دیگر قانون نافذ کرنیوالے  ادارے مٹھی بھر جرائم پیشہ افراد کا خاتمہ کرنے میں ناکام ہیں جس سے جرائم ہیشہ افراد کے حوصلے بلند مظلوم سر جھکائے زندگی گزار رہا ہے سابقہ دور پولیس نے جرائم ہیشہ افراد کے خلاف کء آپریشن کیے مگر پولیس کی ناقص کارکردگی سے پولیس کو مالی وجانی نقصان اٹھانا پڑا عوامی وسماجی حلقے نعمان حیدر واجد حسین شاہد سورج خان سمیت سینکڑوں افراد نے وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار آئی جی پنجاب آر پی او ڈیرہ غازی خان سے مطالبہ کیا یے کہ تھانہ بنگلہ اچھا اور تھانہ سونمیانی  کی حدود کچے پناہ گزین  جرائم پیشہ افراد کے خاتمہ اور امن وامان کی صورتحال بہتر کرنے کے لیے تھانہ سونمیانی اور تھانہ بنگلہ اچھا میں جرات مند دبنگ ایس ایچ اوز اہلٹ فورس دریائی فورس تعنیات کی جائے  اور جرائم پیشہ افراد کی نقل وحرکت اور وارداتوں کو روکنے کے لیے  تھانہ بنگلہ اچھا اور تھانہ سونمیانی کے داخلی وخارجی راستوں کے علاوہ کچے میں جرات مند دبنگ پولیس آفیسران اور اہلکاروں اہلیٹ فورس اور دریائے سندھ پر دریائی فورس کا موثر گشت کا نظام قائم کرکے جرائم پیشہ افراد کو نتھ ڈال کر علاقے کو امن اومان کا گہورا بنایا جائے۔

سوالیہ نشان

مزید :

ملتان صفحہ آخر -