کورونا کی وجہ سے بھارت میں پھنسے آسٹریلوی تاجر کی موت ہوگئی 

کورونا کی وجہ سے بھارت میں پھنسے آسٹریلوی تاجر کی موت ہوگئی 
کورونا کی وجہ سے بھارت میں پھنسے آسٹریلوی تاجر کی موت ہوگئی 
سورس: Facebook/trina solar

  

کنبرا(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کی وباءکے باعث بھارت میں پھنس جانے والا آسٹریلوی کاروباری شخص کورونا وائرس کا شکار ہو کر بھارت ہی میں موت کے منہ میں چلا گیا۔برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق آسٹریلوی شہر سڈنی کے رہائشی اس شخص کا نام گووند کانت تھا۔ سڈنی میں واقع گووند کی کمپنی کی طرف سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ وہ رواں سال اپریل میں فیملی وجوہات کی بناءپر بھارت گیا اور وہاں پھنس گیا۔ گزشتہ دنوں اس میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی اور حالت سنگین ہونے پر اسے ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں گزشتہ روز اس کی موت واقع ہو گئی۔

رپورٹ کے مطابق گووند کانت بھارت میں کورونا وائرس سے ہلاک ہونے والا دوسرا آسٹریلوی شہری ہے۔ دونوں آسٹریلوی شہری آسٹریلوی حکومت کی طرف سے بھارت پر عائد کی بھی سفری پابندی کی وجہ سے بھارت میں پھنس گئے اور کورونا وائرس کا شکار ہو کر دنیا سے رخصت ہو گئے۔آسٹریلوی حکومت کی طرف سے بھارت سے لوگوں کے آسٹریلیا میں داخل ہونے پر 3ہفتے کے لیے پابندی لگائی گئی ہے۔ اس پابندی کی وجہ سے 9ہزار سے زائد آسٹریلوی شہری بھارت میں پھنسے ہوئے ہیں۔ گووند کی بہن نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ”گووند نے ایئرانڈیا کی ایک پرواز کا ٹکٹ بھی بک کروا لیا تھا لیکن آسٹریلوی حکومت کی طرف سے پابندی لگا دیئے جانے کے بعد پرواز منسوخ کر دی گئی اور گووند بھارت ہی میں رہ گیا۔“

مزید :

بین الاقوامی -