کپاس کی کاشت کیلئے رواں ماہ انتہائی اہمیت کا حامل

  کپاس کی کاشت کیلئے رواں ماہ انتہائی اہمیت کا حامل

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 لاہور(لیڈی رپورٹر)سیکرٹری زراعت پنجاب افتخار علی سہونے کہا ہے کہ کپاس کے زیرِ کاشت رقبہ اور پیداوار میں اضافہ ملکی معیشت کے استحکام کا ضامن ہے۔کپاس کی کاشت کے حوالے سے رواں ماہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ تمام متعلقہ ادارے بشمول محکمہ زراعت کی فیلڈ ٹیمیں، ضلعی انتظامیہ اور ریونیو کا عملہ ملکرکپاس کی بحالی کے پروگرام پر عملدرآمد کرتے ہوئے کاشتکاروں کے شانہ بشانہ کام کررہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے کمشنر آفس سرگودھا میں کاٹن ایکشن پلان 2023-24 سے متعلق سرگودھا ڈویڑن میں جاری سرگرمیوں کے جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں کمشنر سرگودھا ڈویڑن اجمل بھٹی ،ڈپٹی کمشنرز سرگودھا ، بھکر، میانوالی اور خوشاب کے علاوہ ڈائریکٹر جنرل زراعت (توسیع) پنجاب محمد انجم علی، ڈائریکٹر جنرل زراعت (پیسٹ وارننگ) رانا فقیر احمد،چیف سائنٹسٹ سٹرس ریسرچ انسٹیٹیوٹ محمد نواز خان میکن،ڈائریکٹر زراعت (توسیع) سرگودھا چوہدری شاہد حسین اور محکمہ زراعت سرگودھا ڈویڑن کے افسران وترقی پسند کاشتکاروں نے شرکت کی۔

اس موقع پر ڈائریکٹر زراعت (توسیع) سرگودھا شاہد حسین نے کاٹن ایکشن پلان سے متعلق بریفنگ دیتے ہوئے شرکائ کو بتایا کہ اس سال سرگودھا ڈویڑن کپاس کی کاشت کا ہدف 1 لاکھ80 ہزار ایکڑ مقرر کیا گیا ہے جس میں سے اب تک قریباً1لاکھ33 ہزاررقبہ کپاس کے زیرِ کاشت لایا جا چکا ہے۔ اس موقع پر سیکرٹری زراعت پنجاب افتخار علی سہو نے کہا کہ سرگودھا ڈویڑن نے قریباً 73 فیصد تک کپاس کی کاشت کا ہدف حاصل کر لیا ہے جوقابلِ ستائش ہے۔کپاس کی کاشت کیلئے آئندہ چند ہفتے انتہائی اہمیت کے حامل ہیں۔

مزید :

کامرس -