فوڈ اتھارٹی ٹیموں کا صحت دشمن مافیا کےخلاف آپریشن تیز

فوڈ اتھارٹی ٹیموں کا صحت دشمن مافیا کےخلاف آپریشن تیز

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
ملتان، ڈیرہ غازیخان (سپیشل رپورٹر،سٹی رپورٹر) لودھراں میں ٹیسٹ کے دوران مشروبات کی تیاری میں مصنوعی مٹھاس اور ممنوعہ اجزا کی ملاوٹ پائی گئی۔ سوڈا واٹر کی جعلی بوتلوں میں پیکنگ اور جعلی لیبلنگ کی جارہی تھی۔ کارروائیوں کے دوران سینکڑوں لٹر ناقص مشروبات تلف کردی گئیں۔مضر صحت مشروبات لوکل ایریاز میں کریانہ سٹورز پر سپلائی کی جانی (بقیہ نمبر38صفحہ7پر )
تھیں۔گرمیوں میں ناقص مشروبات بنانے والوں کیخلاف کارروائیوں کا سلسلہ جاری رہے گا۔ اسی طرح چونگی نمبر 22 ملتان میں واقع 2 ہوٹلز کو کچن ایریا کے پاس واش روم کی موجودگی،کھانوں کی تیاری میں ناقابلِ سراغ اجزا کا استعمال کرنے اور پروسیسنگ ایریا میں مردہ حشرات پائے جانے پر اصلاح تک بند کر دیا گیا۔
عوامی شکایت پر پنجاب فوڈ اتھارٹی کا سیوریج کے پانی سے اگائی جانے والی سبزیوں کے خلاف آپریشن،فوڈ سیفٹی ٹیم کی موضع نور خیرانی کوٹ سلطان میں کئی کنال سبزیوں کی چیکنگ،سیوریج کے پانی سے سیراب کی گئی 8 کنال سبزیوں کا ٹریکٹر کے ذریعے خاتمہ کر دیا گیا،سیوریج کے زہریلے پانی سے مٹر کی فصل کاشت کی گئی تھی۔ تفصیلات کے مطابق فوڈ سیفٹی ٹیم کی موضع نور خیرانی کوٹ سلطان میں کئی کنال سبزیوں کی چیکنگ کی گئی۔ سیوریج کے پانی سے سیراب کی گئی 8 کنال سبزیوں کا ٹریکٹر کے ذریعے خاتمہ کر دیا گیا۔سیوریج کے زہریلے پانی سے مٹر کی فصل کاشت کی گئی تھی۔سبزیوں اور دیگر خوراک کی کاشت کے لیے ٹیوب ویل کا پانی استعمال کیا جائے۔آلودہ پانی سے اگی سبزیوں میں شامل زہریلے مادے خوراک کا حصہ بن کر متعدد موزی بیماریوں کا باعث بنتے ہیں۔انڈسٹریل ویسٹ اور سیوریج کے پانی سے صرف آ¶ٹ ڈور پلانٹس، پٹسن اور دیگر ڈیکوریشن پلانٹس اگائے جاسکتے ہیں۔کھیت سے پلیٹ تک محفوظ خوراک کی فراہمی پنجاب فوڈ اتھارٹی کا اولین فریضہ ہے۔