وزیراعظم شہباز شریف اور ایرانی صدر نے بارڈر مارکیٹ اور بجلی ترسیلی منصوبے کا افتتاح کردیا

وزیراعظم شہباز شریف اور ایرانی صدر نے بارڈر مارکیٹ اور بجلی ترسیلی منصوبے کا ...
وزیراعظم شہباز شریف اور ایرانی صدر نے بارڈر مارکیٹ اور بجلی ترسیلی منصوبے کا افتتاح کردیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

کوئٹہ(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم شہباز شریف اور ایرانی صدر نے پاک ایران سرحد پر بارڈر مارکیٹ اورگبدپولان بجلی ترسیلی منصوبے کا افتتاح کردیا۔
نجی ٹی وی چینل دنیا نیوز کے مطابق وزیراعظم شہبازشریف نے پاک ایران سرحد کا دورہ کیا،وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری اور مریم اورنگزیب بھی وزیراعظم کے ہمراہ ہیں ،وزیراعظم شہباز شریف اور ایرانی صدرابراہیم رئیسی نے بارڈر مارکیٹ کا افتتاح کردیا،دونوں سربراہان نے بارڈر مارکیٹ کے مختلف حصوں کا دورہ کیا۔
مزید 5 بارڈر مارکیٹس پر کام جاری ہے جو جلد تجارت کیلئے کھول دی جائے گی ،بارڈر مارکیٹ سے دونوں اطراف کے عوام کیلئے روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے ۔
گبدپولان بجلی ترسیلی منصوبے کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کا کہناتھا کہ پاکستان اور ایران کے درمیان دیرینہ برادرانہ تعلقات ہیں،دونوں ممالک کے عوام مذہبی رشتے کے بندھن میں بندھے ہیں،پاک ایران تعلقات وقت کے ساتھ مزید مضبوط ہو رہے ہیں۔
ایرانی صدر نے کہاکہ منصوبے پر پاکستانی حکومت اور عوام کو مبارکباد پیش کرتاہوں،پاکستان کیساتھ شعبہ توانائی میں تجارت کا فروغ چاہتے ہیں،منصوبے سے دونوں ممالک میں روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے،خطے کے تمام مسائل کا حل مذاکرات سے ہی ممکن ہے۔
وزیراعظم شہبازشریف کا تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہناتھا کہ آج پاک ایران تاریخ میں نئے باب کا اضافہ ہوا ہے،اس میں کوئی شک نہیں کہ ایران اور پاکستان برادر ملک ہیں،آج ہم نے پشین مندمارکیٹ کاافتتاح کیا،اس طرح کی مزید6 مارکیٹس بنائی جائیں گی ،ان کاکہناتھا کہ یہ ایران اور پاکستان کے تجارتی روابط میں سنگ میل ہے، خطے میں خوشحالی کے نئے سفر کاآغاز ہو گا، صدر ایران نے اس منصوبے کی تکمیل میں ذاتی دلچسپی لی،منصوبہ التوا کا شکار تھا، تاخیر پاکستان کی جانب سے ہوئی۔