ترک صدر کے خطاب کا بائیکاٹ کرنے والوں نے بچگانہ اور غیر ذمہ دارانہ رویے کا مظاہرہ کیا: حافظ محمد ادریس

ترک صدر کے خطاب کا بائیکاٹ کرنے والوں نے بچگانہ اور غیر ذمہ دارانہ رویے کا ...
ترک صدر کے خطاب کا بائیکاٹ کرنے والوں نے بچگانہ اور غیر ذمہ دارانہ رویے کا مظاہرہ کیا: حافظ محمد ادریس

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان حافظ محمد ادریس نے کہا ہے کہ ترک صدر کے خطاب کا بائیکاٹ کرنے والوں نے بچگانہ اور غیر ذمہ دارانہ رویے کا مظاہرہ کیا۔

نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان حافظ محمد ادریس نے کہا ہے کہ پاکستانی بارڈر اور ایل او سی پر بھارتی فوج کی بلا اشتعال گولہ باری آئے روز کا معمول بن چکاہے ۔بھارتی جارحیت کا ہماری افواج بھرپور جواب دے رہی ہیں مگر حکمران بھیگی بلی بنے بیٹھے ہیں اور بھارت کے خلاف زبان کھولنے کو تیار نہیں ۔ قوم کی گردنوں پر حکمرانوں میں جرا¿ت نہیں کہ وہ بھارت کو للکار اور موثر طریقے سے عالمی برادری کو اس ظلم و جبر کے خلاف ہمنوا بنا سکیں ۔ترک صدر کے خطاب کا بائیکاٹ کرنے والوں نے بچگانہ اور غیر ذمہ دارانہ رویے کا مظاہرہ کیا۔ ترکی ہمارا دوست ملک ہے ، ہمیں آپس کے اختلافات کو اپنی حد تک ہی رکھنا چاہیے ۔اتحاد کے بغیر کوئی قوم آگے نہیں بڑھ سکتی ۔ان خیالا ت کا اظہار انہوں نے جامع مسجد منصورہ میں جمعہ کے بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے حکمرانوں کی کوتاہی کی وجہ سے مکار مودی پاکستان سے اچھے تعلقات والے ممالک کے ساتھ تعلقات قائم کرکے انہیں پاکستان سے دور کرنے میں کامیاب ہورہاہے۔دشمن نے ہمیں گھیر رکھا ہے اور آئے روز بلا اشتعال فائرنگ میں ہمارے جوانوں اور شہریوں کو شہید کررہا ہے لیکن حکومتی سطح پر بھارتی جارحیت کے خلاف حکمران کوئی آواز بلند نہیں کر رہے ۔

انہوں نے ترک صدر طیب اردوان کے پارلیمنٹ سے مشترکہ خطاب کو سراہتے ہوئے کہا کہ ترک صدر نے خلافت کے احیاء،پاکستان کے ساتھ لازوال اسلامی رشتے اور کشمیر یوں کی مکمل حمایت کے جس عزم کا اظہار کیا ہے وہ قابل تحسین ہے ،ترکی عالم اسلام کی قیادت کرنے کی اہلیت رکھتا ہے ۔حکومت کو چاہئے تھا کہ قومی قیادت کی معزز مہمان کے ساتھ ملاقاتوں کا باقاعدہ اہتمام کرتی مگر حکمرانوں نے ترک صدر کے دورہ پاکستان کو فیملی فنکشن بنانے کی کو شش کی جو انتہائی قابل مذمت ہے اور اس سے قومی یکجہتی کو شدید ٹھیس پہنچی ہے ۔انہوں نے کہا کہ قومی وسائل چند لٹیروں کے ہاتھ میں ہیں ۔ عوام کے ٹیکسوں سے جمع ہونے والے پیسے حکمرانوں کے اللے تللوں پر خرچ کیے جارہے ہیں اور عوام بنیادی سہولتوں سے محروم ہیں۔

مزید : لاہور