آئی ایم ایف نے قرضہ دینے کے لیے کیا سخت شرائط رکھیں ؟ایسی خبر آگئی کہ پاکستانیوں کے بھی ہوش اڑ جائیں گے

آئی ایم ایف نے قرضہ دینے کے لیے کیا سخت شرائط رکھیں ؟ایسی خبر آگئی کہ ...
آئی ایم ایف نے قرضہ دینے کے لیے کیا سخت شرائط رکھیں ؟ایسی خبر آگئی کہ پاکستانیوں کے بھی ہوش اڑ جائیں گے

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )آئی ایم ایف نے پاکستان کو قرضہ دینے کے لیے چا ر سخت شرائط عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ مطالبات فوری ماننا ہونگے ورنہ قرضے کا وعدہ نہیں کر سکتے ۔

میڈ یا رپورٹس کے مطابق آئی ایم یف نے شرائط عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایف بی آر ٹیکس وصولیوں کی کمی پر قابو پائے اور مستقبل میں 4 ہزار 100 ارب روپے ٹیکس وصولی کا ہدف پورا کرنے کا طریقہ کار بتایا جائے، ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قیمت کنٹرول نہ کی جائے، اس کا تعین مارکیٹ کو کرنے دیا جائے،پاکستان اپنا مالی خسارہ کم کرنے کے اقدامات واضح کرے اور پہلے4 ماہ میں 150ارب روپے سے زیادہ کا خسارہ پورا کرنے کا طریقہ کار بتایا جائے،توانائی کے شعبے کا گردشی قرضہ ختم کیا جائے اور مستقبل میں یہ قرضہ نہ بنے۔

واضح رہے کہ پاکستان آئی ایم ایف کا رکن ہونے کی حیثیت سے 14ارب 60کروڑ ڈالر قرض لے سکتا ہے جس میں سے6 ارب ڈالر کا قرض پاکستان پہلے ہی حاصل کر چکا ہے اور اب اس کے کوٹے کا 8 ارب 60 کروڑ ڈالر باقی ہے۔

مزید : بزنس