وزیراعظم عمران خان کی ٹیم میں چند اناڑی کھلاڑی ہیں:چوہدری شجاعت حسین

وزیراعظم عمران خان کی ٹیم میں چند اناڑی کھلاڑی ہیں:چوہدری شجاعت حسین
وزیراعظم عمران خان کی ٹیم میں چند اناڑی کھلاڑی ہیں:چوہدری شجاعت حسین

  



لاہور (صباح نیوز) پاکستان مسلم لیگ ( ق )کے صدر چوہدری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کی ٹیم میں چند اناڑی کھلاڑی ہیں جو درست مشورہ دینے کے قابل نہیں ہیں۔

لاہور میں گفتگو کرتے ہوئے چوہدری شجاعت حسین کا کہنا تھا کہ یہ اناڑی کھلاڑی وزیر اعظم عمران خان کو مشورہ دے رہے تھے کہ وہ اسلام آباد میں مولانا فضل الرحمن کے دھرنے کے موقع پر اپنی حکومت کی رٹ قائم کریں، وزیراعظم نے ناتجربہ کار کھلاڑیوں کے مشورے کو قبول نہ کرکے اپنی دانائی کا ثبوت دیا ہے۔جمعیت علمائے اسلام کے آزادی مارچ کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ دانائی سے نمٹنے کا کریڈٹ وزیراعظم عمران خان اور وزیرداخلہ اعجاز شاہ کو جاتا ہے، اگر اس سے عقل مندی سے نہیں نمٹتے تو مظاہرین اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے درمیان جھڑپوں سے بچنا نامکن تھا۔ایک سوال پر ان کا کہنا تھا کہ کابینہ میں شامل پی ٹی آئی کے کرتا دھرتا وزیراعظم عمران خان کو کبھی بھی ٹھیک مشورہ نہیں دیتے اور ان کا بنیادی مقصد وزیراعظم کے لیے مسائل کھڑا کرنا اور انہیں جارحانہ پالیسیوں کی طرف دھکیلنا ہے جو کسی وقت ناکام بھی ہوجاتی ہیں۔چوہدری شجاعت حسین نے کہا کہ مولانا فضل الرحمن کے اسلام آباد دھرنے میں یہ چوہدری ہی تھے جنہوں نے پرامن اختتام کے لیے کلیدی کردار ادا کیا حالانکہ ان عناصر نے مشکل وقت میں عمران خان کو ہمیشہ چوہدریوں کے ساتھ مشورہ کرنے سے دور رکھا ہے۔چوہدری شجاعت حسین کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی تاحال دوسری وزارت دینے میں تاخیر کررہی ہے جبکہ پنجاب میں دوسری وزارت اُس وقت ملی جب ہمارے واحد وزیر نے احتجاجاً استعفی دے دیا تھا۔

مزید : قومی