برطانوی شہزادہ اینڈریو نے جنسی الزامات کو بے بنیاد قرار دے دیا

برطانوی شہزادہ اینڈریو نے جنسی الزامات کو بے بنیاد قرار دے دیا

  



لندن (این این آئی)برطانوی ملکہ الزبتھ کے بیٹے شہزادہ اینڈریو نے خود پر لگنے والے جنسی الزامات کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ میں شراب نہیں پیتا اور مجھے پسینہ بھی نہیں آتا ہے۔شہزادہ اینڈریو نے برطانوی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ ورجینیا رابرٹس نامی خاتون سے کبھی ملاقات نہیں کی، میری یاد داشت میں ایسی کوئی خاتون نہیں ہیں،،شہزادہ اینڈریو نے بتایا کہ فاک لینڈ کی جنگ میں مجھے گولی لگی تھی جس کے بعد بطور علاج ایڈرینالین کی زیادہ مقدر لینے سے اب مجھے پسینہ نہیں آتا۔شہزادہ اینڈریو کا کہنا تھا کہ جس روز ورجینیا کے ساتھ تصویر لینے کی بات ہے وہ بھی غلط ہے، کیونکہ جس روز تصویر لینیکا دعوی کیا گیا ہے وہ اس دن اپنی بیٹی کیساتھ پیزا کھانے گئے تھے۔شہزادہ اینڈریو پر جنسی استحصال کا الزام لگانے والی امریکی خاتون ورجینیا رابرٹس نے امریکی عدالت میں جمع کرائے گئے بیان میں کہا کہ جب وہ 15 سال کی تھی جب ایک ارب پتی بزنس مین جیفری اپیسٹین نے اسے شہزادہ اینڈریو کے ساتھ مل کر جنسی تعلقات قائم کرنے پر مجبور کیا تھا۔ورجینیا رابرٹس کا شہزادہ اینڈریو پر الزامات لگاتے ہوئے مزید کہنا ہے کہ شہزادے سے اس کی ملاقات نائٹ کلب میں ہوئی تھی جہاں وہ نوکری کرتی تھی، شہزادے نے اسے شراب پلائی اور اس کے ساتھ رقص کیا تھا۔واضح رہے کہ شہزادہ اینڈریو برطانوی ملکہ الزبتھ کے دوسرے بیٹے اور برطانیہ کے تخت و تاج کے امیدواروں کی قطار میں آٹھویں نمبر پر ہیں۔

مزید : عالمی منظر