پنچایت نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بننے والی متاثرہ لڑکی کو 5 ہزار روپے جرمانہ کردیا

پنچایت نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بننے والی متاثرہ لڑکی کو 5 ہزار روپے جرمانہ ...
پنچایت نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بننے والی متاثرہ لڑکی کو 5 ہزار روپے جرمانہ کردیا

  



رائے پور (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست چھتیس گڑھ میں پنچایت نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بننے والی لڑکی کو ہی 5 ہزار روپے کا جرمانہ عائد کردیا۔ پنچایت کی جانب سے متاثرہ لڑکی کو یہ جرمانہ پولیس کو شکایت کرنے پر عائد کیا گیا ہے، پنچوں نے دونوں ملزم لڑکوں کو بھی 5، 5 ہزار روپے کا جرمانہ عائد کیا ہے۔

چھتیس گڑھ کے ضلع جشپور میں پنچایت کی جانب سے انوکھے انصاف کا معاملہ سامنے آیا تو پولیس بھی حرکت میں آگئی اور اس نے دونوں ملزمان کو گرفتار کرلیا ۔ متاثرہ لڑکی نے صحافیوں کو بتایا کہ پنچایت نے اس پر جرمانہ اس لیے عائد کیا ہے کیونکہ اس نے پولیس سے رجوع کرکے گاﺅں کی بدنامی کا جرم سرزد کیا ہے۔

پولیس کو درج کرائی گئی شکایت کے مطابق 23 سالہ لڑکی کا اپنے بھائی سے جھگڑا ہوا تھا جس پر وہ قریبی بستی میں اپنے رشتے داروں کے گھر چلی گئی تھی۔ وہاں ملزمان سندیپ اور کرشنا سیمنٹ ڈھونے کے بہانے نوجوان لڑکی کو اپنے ساتھ لے گئے اور اس کی اجتماعی آبرو ریزی کی۔

پولیس کے مطابق لڑکی کے ساتھ زیادتی کا واقعہ 2 نومبر کو پیش آیا جس پر 14 نومبر کو پنچایت ہوئی اور لڑکی اور ملزمان کو جرمانہ عائد کیا گیا۔ پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے 16 نومبر کی شام کو دونوں ملزمان کو گرفتار کرلیا۔

مزید : جرم و انصاف