پرویز الہٰی کے جانے سے قبل وزراءعمران خان کو درست بات نہیں بتارہے تھے ، ن لیگی رہنما کا دھرنے کے حوالے سے دعویٰ

پرویز الہٰی کے جانے سے قبل وزراءعمران خان کو درست بات نہیں بتارہے تھے ، ن ...
پرویز الہٰی کے جانے سے قبل وزراءعمران خان کو درست بات نہیں بتارہے تھے ، ن لیگی رہنما کا دھرنے کے حوالے سے دعویٰ

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) مسلم لیگ ن کے رہنما محسن رانجھا نے کہاہے کہ پرویز الہٰی جب مولانا فضل الرحمان سے مذاکرات کرنے گئے تو عمران خان کوپتہ چلا کہ وزراءان کو درست بات نہیں بتاتے تھے بلکہ کچھ وزراءنے تو یہ بات بھی کی کہ وہاں پانچ چھ ہزار لوگ ہیں اور وہاں کریک ڈاﺅن شروع کردیں ۔

جیونیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“میں گفتگو کرتے ہوئے محسن رانجھا نے کہا کہ جس طرح حکومت نے معیشت کو برے طریقے سے چلایاہے ، اسی طرح ایوان کو بھی چلایا ہے ۔انہوں نے کہا کہ پرویز الہٰی جب مولانا فضل الرحمان سے مذاکرات کرنے گئے تو عمران خان کوپتہ چلا کہ وزراءان کو درست بات نہیں بتاتے تھے بلکہ کچھ وزراءنے تو یہ بات بھی کی کہ وہاں پانچ چھ ہزار لوگ ہیں اس لئے کریک ڈاﺅن شروع کردیں ۔ یہ توپرویز الہٰی نے جاکر عمران خان کوبتایا کہ وہاں بہت لوگ ہیں توان کودرست بات کا پتہ چلا ۔

انہوں نے کہا کہ اگر وہاں کریک ڈاﺅن شروع ہوجاتا تو پھر کیا ہونا تھا ؟ انہوں نے کہا کہ سب کچھ اچھے طریقے سے ہوسکتا تھا لیکن اگر حکومت ایوان کواچھے طریقے سے چلاتی ۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان کی تقریرنے ایک بار پھر تمام ایشوز سے توجہ ہٹا دی ہے ۔

مزید : قومی