استنبول دھماکہ، ترک عدالت کا17مشتبہ افراد کی گرفتاری کا حکم

استنبول دھماکہ، ترک عدالت کا17مشتبہ افراد کی گرفتاری کا حکم
استنبول دھماکہ، ترک عدالت کا17مشتبہ افراد کی گرفتاری کا حکم

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

استنبول(ڈیلی پاکستان آن لائن) ترکی کی ایک عدالت نے  ایک شامی خاتون سمیت 17 مشتبہ افراد کو مرکزی استنبول میں ہونے والے بم دھماکے میں ملوث ہونے کے الزام میں حراست میں لینے کا حکم دیا ہے. دھماکے میں چھ افراد ہلاک ہو گئے تھے۔ حکومت نے گزشتہ اتوار کے حملے کا الزام کالعدم کردستان ورکرز پارٹی (پی کے کے) پر عائد کیا ہے، جسے انقرہ اور اس کے مغربی اتحادیوں نے دہشت گرد گروپ کے طور پر نامزد کیا ہے۔

پی کے کے  اور اس کی شامی شاخ وائی پی جے نے دھماکے میں ملوث ہونے سے انکار کیا ہے۔ کسی فرد یا گروہ نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔ ترک پولیس نے مرکزی ملزم الہام البشیر  نامی ایک شامی خاتون جس کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ کرد عسکریت پسندوں کے لئے کام کرتی تھی، کو استنبول کے ایک مضافاتی علاقے سے گرفتار کر لیا تھا.