حالیہ ضمنی انتخاب کی طرح بلدیاتی انتخابات بھی پر امن ہونگے کیپٹن امین وینس

حالیہ ضمنی انتخاب کی طرح بلدیاتی انتخابات بھی پر امن ہونگے کیپٹن امین وینس

 لاہور(کر ائم سیل)سی سی پی او لاہور کیپٹن (ر)محمد امین وینس نے کہا ہے کہ لاہور پولیس کی NA-122 میں غیر جانبدارانہ حکمت عملی اور بہترین حفاظتی اقدامات نے ظاہرکیاہے کہ پولیس نہ تو سیاسی اور اس کا لوگوں کی جان ومال کے تحفظ کے علاوہ اور کوئی مقصد نہ ہے ۔ دوسرے قومی اداروں کی طرح محکمہ پولیس بھی ایک قومی ادارہ ہے اس کی اولین ترجیح لوگوں کی جان و مال کے تحفظ کی خاطر ملک دشمن عناصر کے خلاف ڈٹ کر مقابلہ کرنا ہے ۔ لاہور پولیس کی کاوشوں کی وجہ سے NA-122میں زیادہ سیکورٹی خدشات ہونے کے باوجود الیکشن پرُ امن گزرا اور لاہور پولیس کی پوری کوشش ہے کہ بلدیاتی انتخابات بھی ہر سطح پر پرُ امن ہوں ۔تمام سیاسی جماعتوں کو بلا امتیاز سیکورٹی فراہم کرناہمارے فرائض میں شامل ہے۔ بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے لاہور کی 6ڈویژنز کو 12ڈویژنز میں تقسیم کر دیا گیا ہے اور ہر ڈویژن میں ضلعی انتظامیہ کی طرف سے ایک ایک اسسٹنٹ کمشنر بھی کوآرڈینیشن میں رہے گا۔شہر میں کل 3500 کے قریب پولنگ اسٹیشن ہو نگے جو کہ 1700 عمارتوں کے اندر منعقد کیے جائیں گے ۔یہ الیکشن گلی گلی اور محلے محلے میں ہونا ہے اس لئے اس الیکشن پر محلے کی سطح پر لڑائیاں ہونے کا خدشہ ہے جس کی وجہ سے لاہور پولیس نے جامع سیکیورٹی پلان ترتیب دیا ہے ۔ لاہور کی 274 یونین کونسلز میں ایک سب انسپکٹر کے ساتھ 10 سے12 جوان ڈیوٹی دیں گے ۔ فوج اور رینجرز کی طرف سے اطلاع کے بعد ان کی نفری کو بھی یونین کونسلز کی سطح پر تقسیم کر دیاجائے گا۔ بلدیاتی انتخابات کے پولنگ ڈے پر کسی کو قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت نہیں دیں گے اسلحہ کی نمائش اور ہوائی فائرنگ پر مکمل پابندی ہوگی۔ ایسے عناصر جو پولنگ ڈے پر مشکل پیدا کر سکتے ہیں ان کیخلاف ابھی سے فہرستیں بنا کر کاروائی کی جائے گی ۔ منشیات فروشوں اور جواریوں کے خلاف بھی موثرکاروائی شروع کر دی گئی ہے اوربلدیاتی انتخابات میں کسی بھی قسم کا کوئی مسئلہ بنتا بھی ہے تو آپس میں مل بیٹھ کر اس کو حل کریں گے۔ میں اور میری پوری فورس کوارڈینیشن کے لئے 24 گھنٹے دستیاب ہیں ۔ نچلی سطح پر کوارڈینیشن کے لئے ڈویژنل سطح پر کنٹرول روم بھی بنایا جائے گا جس میں ہر سیاسی جماعت کی طرف سے ایک فوکل پرسن بھی ہوگا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دفتر میں پاکستان تحریک انصاف کے وفد سے ملاقات کے دوران کیا اس موقع پر تحریک انصاف کی طرف سے رکن قومی اسمبلی شفقت محمود، میاں اسلم اقبال، ڈاکٹر یاسمین راشد اور مہر واجد سمیت دیگر رہنما جبکہ لاہور پولیس کی جانب سے ڈی آئی جی آپریشنز ڈاکٹر حیدر اشرف، ایس ایس پی سہیل اختر سکھیرا، ایس ایس پی حسن مشتاق سکھیرا،ایس ایس پی سی آئی اے محمد عمرورک،ایس ایس پی اطہر اسماعیل ، ایس پی ہیڈ کوارٹر عمر سعید ، ایس پی مجاہد قرار حسین سمیت تمام ڈویژنل ایس پیز نے شرکت کی ۔ اس موقع پر تحریک انصاف کے رہنما شفقت محمود نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات چونکہ پورے شہر میں ہونے ہیں اس لئے نچلی سطح پر فسادات کی گنجائش موجود ہے جس طرح پولیس نے NA-122 پر الیکشن پر امن کروایا اسی طرح امید ہے کہ بلدیاتی انتخابات کے دوران بھی باہمی کوارڈینیشن رہے گی ۔ ہمارے نزدیک شر پسند عناصر کی فہرست بہت جلد لاہور پولیس کو فراہم کر دی جائے گی۔ اس بلدیاتی انتخابات کے اثرات ملکی سیاست پر پڑیں گے اس لئے اس کا پرامن ہونا بہت بڑا چیلنج ہے ۔ انہوں نے بلدیاتی انتخابات کے موقع پر موبائل رسپونس یونٹ یا ایک ہیلپ لائن متعارف کرانے کی تجویز دی۔ جس پر سی سی پی او کپٹن (ر)امین وینس نے کہا کہ لاہور پولیس بلدیاتی انتخابا ت کے موقع پر ہیلپ، ہاٹ لائن ، ایس ایم ایس سروس اور واٹس اپ نمبر کی سہولت بھی فراہم کر رہی ہے ۔تاکہ کہیں بھی مسئلہ پیدا ہونے کے بعد فوری حل کر لیا جائے۔

مزید : علاقائی