نوشہرہ ،ڈینگی بے قابو انتظامیہ عملی اقدامات کے بجائے خاموش تماشائی

نوشہرہ ،ڈینگی بے قابو انتظامیہ عملی اقدامات کے بجائے خاموش تماشائی

پبی ( نما ئندہ پاکستان)نوشہرہ ڈینگی بے قابو انتظامیہ عملی اقدامات کے بجائے خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے۔پیر کے روز قاضی حسین احمد میڈئکل کمپلیکس نوشہرہ اور محکمہ صحت کے زرائع کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن کے صوبائی ایڈیشنل سیکڑیری جنرل خیبرپختونخوا اختیار ولی خان کی نو سالہ بیٹی وصولہ اختیار ولی سمیت پانچ مریضوں میں ڈینگی وائرس کی تصدیق کردی گئی۔مریضوں کے مطابق سرکاری ہسپتالوں میں سہولیات کا شدید فقدان ہے اس وجہ سے وہ پشاور اور دوسرے ہسپتال منتقل ہورہے ہیں۔زرائع کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن کے صوبائی ایڈیشنل سیکڑیری جنرل خیبرپختونخوا اختیار ولی خان کی نو سالہ بیٹی وصولہ اختیار ولی کو شدید بخار کی شکایت پر قاضی حسین احمد میڈئکل کمپلیکس نوشہرہ لایا گیا تو خون کے نمونے میں ڈینگی وائر س کی تصدیق ہوگی۔ پاکستان مسلم لیگ ن کے صوبائی ایڈیشنل سیکڑیری جنرل خیبرپختونخوا اختیار ولی خان کے مطابق ان کے علاقے کابل ریور میں ہر گھر میں ڈینگی کے دو سے تین مریض موجود ہیں نوشہرہ کی انتظامیہ سیمنار اور اخباری بیانات دیکر عوام کو بے قوف بنارہی ہے۔قاضی حسین احمد میڈئکل کمپلیکس نوشہرہ کے زرائع کے مطابق دو مریضوں احسان علی ۵۵ سال اور مسماۃ نفیسہ خان عمر ۳۴کو جہانگرہ بلال مسجد محلے اور ۲۲ سالہ نوجوان مسمی جہانگیر خان کو امانگڑھ سے لیاگیا ان کے خون کے نمونوں میں ڈینگی وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔ہسپتال کے زرائع کے مطابق اب تک۳۴۲ مریضوں میں ڈینگی وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...