سول ایوی ایشن کے 10 سالہ ملازمت والوں کو پنشن کی ادائیگی کے احکامات

سول ایوی ایشن کے 10 سالہ ملازمت والوں کو پنشن کی ادائیگی کے احکامات

  

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورہائی کورٹ کے جسٹس اکرام اللہ اور جسٹس احمدعلی پرمشتمل دورکنی بنچ نے سول ایوی ایشن اتھارٹی کے 10سال سے کم مدت والے ملازمین کوپنشن ادا کرنے کے احکامات جاری کردئیے ہیں عدالت عالیہ کے فاضل بنچ نے یہ احکامات گذشتہ روز کامران سرورایڈوکیٹ کی وساطت سے دائرامتیازخان اوراحسان اللہ کی رٹ پٹیشن پرجاری کئے اس موقع پر عدالت ک بتایاگیاکہ درخواست گذار سول ایوی ایشن اتھارٹی میں ڈیلی ویج پر2000 ء سے قبل بھرتی ہوئے تھے جو2009میں مستقل ہوئے اوراحسان اللہ جولائی2018ء کوریٹائرہوا جبکہ امتیازبھی2018ء میں ریٹائر ہوااورمستقلی کے بعدان کی مدت ملازمت نوسال سے زائدبنتی ہے تاہم سول ایوی ایشن کے حکام نے مدت ملازمت دس سال سے کم ہونے کی بناء پر پنشن کی ادائیگی سے انکارکردیا ہے جو کہ غیرقانونی اورغیرآئینی اقدام ہے کیونکہ درخواست گذار محکمے میں ڈیلی ویج بھرتی ہوئے تھے لہذایہ مدت بھی ان کی ملازمت میں شمارکی جائے عدالت عالیہ نے دوطرفہ دلائل مکمل ہونے پررٹ پٹیشن منظورکرلی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -