”انوار رضا“ علی ہجویری نمبر کی خصوصی اشاعت

”انوار رضا“ علی ہجویری نمبر کی خصوصی اشاعت

  

سہ ماہی ”انوار رضا“ جوہر آباد نے سوا سات سو سے زائد صفحات پر عظیم الشان ”حضرت داتا گنج بخش علی ہجویری نمبر“شائع کر دیا ہے جس میں مختلف النواع رنگارنگ علم افروز تحقیقی مضامین شامل ہیں جو مدیراعلیٰ مولانا ملک محبوب الرسول قادری کی جستجو اور تحقیق کا ثمر ہیں۔ اس اشاعتِ خاص کو دس ابواب میں تقسیم کیا گیا ہے جو حضرت فیض عالم سیدی داتا گنج بخش قدس سرہ، کی شخصیت کے مختلف پہلوؤں کو اجاگر کرتے ہیں۔ ان کے احوال و آثار، سوانح، خاندانی پس منظر، پیش منظر، اسفار، تعلیمی مراحل، تبلیغ، تدریس، تصنیف و تالیف، خانقاہ و طریقت اور افکار و نظریات کے علاوہ گراں قدر سماجی خدمات کا احاطہ کرتی دلچسپ اور رواں دواں تحریریں اس نمبرکا حصہ ہیں۔ محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان جن کی اپنی شہرت تو عالمی افق پر ایٹمی سائنس دان کی ہے مگر ان کی تحریریں ہمارے ادب کا خاص حصہ ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ ملک محبوب الرسول قادری نے علامہ شاہ احمد نورانی ریسرچ سنٹر پاکستان اور انٹرنیشنل غوثیہ فورم سے ”انوارِ رضا“ کا سید ہجویری داتا گنج بخش نمبر شائع کرکے کمال احترام سمیٹا ہے۔ تبلیغ کا یہ خوبصورت انداز ہمیں انہی اولیاء اللہ سے ملتا ہے۔ داتا گنج بخشؒ ہمارے ان صوفیاء کرام سے ہیں جن سے اس خطہ کی کثیر آبادی گہری عقیدت رکھتی ہے۔ کراچی یونیورسٹی کے سابق وائس چانسلر ڈاکٹر قاسم پیرزادہ کا کہنا ہے کہ ایمان افروز اور شریعت و طریقت کے ضابطوں سے آراستہ ساعتیں ہمیں رجوع کا موقع فراہم کرتی ہیں تاکہ ہم خیر اور خیر کثیر کے حصول میں دلی کیفیات کے ساتھ شامل ہو سکیں۔ حضرت داتا گنج بخشؒ نمبر کی صورت میں ملک محبوب الرسول قادری کی مدیرانہ پیش رفت کے ساتھ اشاعت دستیاب ہے۔ بزرگ عالم دین اور اسلامی نظریاتی کونسل کے سابق رکن حضرت مفتی محمد اطہر نعیمی نے کہا ہے کہ حضرت علی ہجویری کی ذات محتاج تعارف نہیں صدیوں سے آپ کی تحریریں مسلمانوں ہی نہیں،بلکہ انسانوں کے لئے سبب ہدایت ہیں۔ ملک محبوب الرسول قادری مبارکباد کے مستحق ہیں۔ ڈاکٹر ظہور احمد اظہر کہتے ہیں کہ حضرت کو داتا پیر جانتا اور مانتا ہوں۔ ملک محبوب الرسول قادری نے انوار رضا کی اس اشاعت خاص سے میرے پیارے جوہرآباد کو بھی چمکا دیا ہے، بلکہ میرے میٹھے شہر خوشاب سے اسے کچھ اونچا بھی کر دیا۔ ہجویری چیئر پنجاب یونیورسٹی ڈاکٹر سید قمر علی زیدی نے کہا یہ اشاعت خاص سید ہجویر مخدوم امم حضرت داتا گنج بخش علی ہجویریؒ کی جاودانی تعلیمات سے متعلق علمی، اصلاحی اور تحقیقی مقالات پر مبنی ہے۔ محقق العصر مولانا مفتی محمد خان قادری نے کہا کہ سہ ماہی ”انوار رضا“ جوہر آباد ہماری دینی ملکی صحافت کا معتبر حوالہ ہے اس کا ہر شمارہ اپنی نوع کا منفرد اور جامع شمارہ ہوتا ہے اب کی بار حضرت داتا گنج بخشؒ نمبر بھی اسی سلسلہ کی کڑی ہے۔ ڈائریکٹر اوقاف سید طاہر رضابخاری نے کہا کہ صاحبزادہ محبوب الرسول قادری دینی صحافت کی معتبر شخصیت اور بالخصوص جدید عصری تقاضوں کی روشنی میں خانقاہ کے حقیقی کردار اور تصوف کے احیاء کی ضرورت و اہمیت سے آگاہ ہیں۔ انہوں نے حضرت داتا گنج بخش کی ایمان افروز تعلیمات اور بصیرت افروز افکار سے آگاہی کا سامان کر دیا ہے۔ امیر اہل سنت حضرت پیر میاں عبدالخالق قادری سجادہ نشین بھرچوندی شریف نے کہا کہ انوار رضا جوہرآباد سے ایک علمی ارمغان اہل علم کو ہر تین ماہ بعد ملتا ہے۔ حضرت داتا گنج بخشؒ کا یہ فیض ہے۔ وفاقی وزیر مذہبی امور ڈاکٹر پیر نور الحق قادری نے کہا ہے کہ انوار رضا کی یہ مخلصانہ پیش کش ملت اسلامیہ کو خاطر خواہ فائدہ پہنچائے گی۔ جسٹس (ر) میاں نذیر اختر نے کہا کہ ایک ہزار سال سے علم و معرفت کی یہ شمع روشن ہے اور حضرت داتا گنج ؓکش ہجویری کا فیض جاری ہے۔ ایسے میں ملک محبوب الرسول قادری نے اس خصوصی نمبر کے ذریعے سے عوام کی یہاں تک رسائی آسان کر دی ہے۔ کرنل ڈاکٹر محمد سرفراز محمدی سیفی نے کہا کہ یہ ایک وقیع، علم افروز، تحقیقی اور مبنی برحقیقت مضامین و مناقب، مقالات و تحریروں کے حوالہ سے ایک دستاویز ہے حضرت پیر میاں محمد حنفی سیفی نے کہا کہ نامور صحافی اور میرے دوست مولانا ملک محبوب الرسول قادری کا ذوق و شوق اور طویل دینی خدمات قابل رشک اور لائق تحسین ہیں۔ معروف نعت نگار راجا رشید محمود نے کہا کہ حکمت مآب شخصیات کے کارہائے نمایاں بروئے کار لانے کے لئے ملک محبوب الرسول قادری کی جوہر دار ذہانت مخیر العقول کارنامے انجام دیتی ہے۔ حضرت سید ہجویرؒ کے حضور ان کی زیر نظر کاوش نفیس پیشکش کی صورت میں اسی نوع کا میڈل ہے جو ان شاء اللہ یوم الدین کو بھی صدرِ”محبوب الرسول“ پر تجلی ریز ہو گا۔ انجمن طلباء اسلام کے بانی مفتی جمیل احمد نعیمی نے کہا کہ انوار رضا ملک محبوب الرسول قادری کی صحافتی خدمات کا پختہ حوالہ ہے۔ حضرت داتا گنج بخش کے دم قدم سے تصوف و طریقت کے جہان میں بہاریں ہیں۔ انجمن طلباء اسلام کے سابق مرکزی صدر علامہ پیر صاحبزادہ محمد نور المصطفےٰ رضوی کا کہنا ہے کہ حضرت سیدنا امام حسنؓ کی اولاد سے حضرت داتا گنج بخشؒ بے مثل اور عدیم النظیر فیض رسان شخصیت ہیں ان کی عظمت کا سکہ آج بھی دلوں پر ہے۔ لاہور ان کے وجود سے روشن اور منور ہے۔ ظفر الاسلام ظفر برہانی، پیر فیض الامین فاروقی اور علامہ صاحبزادہ محمد اسماعیل فقیر الحسنی کے منظومات کمال ہیں۔ انجمن محبان محمدؐ کے سربراہ پیر سید فیض الحسن شاہ بخاری اور حضرت میاں محمد آصف سیفی نے بھی بھرپور اعترافیہ پیغامات صادر کئے ہیں۔ اشاعت خاص حضرت داتا علی ہجویری نمبر کے دس ابواب ہزار سالہ تاریخ تصوف کا خلاصہ اور نچوڑ ہیں۔ اور حضرت فیض عالم ؒ کے افکار و تعلیمات سے بھرپور ہے۔

مزید :

ایڈیشن 1 -