مقبوضہ کشمیر، سینکڑوں نوجوان کرفیو توڑ کو سڑکوں پر نکل آئے، شہدا ء کی نماز جنازہ میں شرکت

  مقبوضہ کشمیر، سینکڑوں نوجوان کرفیو توڑ کو سڑکوں پر نکل آئے، شہدا ء کی نماز ...

  

سرینگر/اوسلو (این این آئی،آئی این پی)مقبوضہ کشمیر میں کرفیو مسلسل 75ویں بھی جاری رہا،فوجی محاصرے اور ذرائع ابلاغ کی معطلی کے باوجود بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں شہید ہونے والے تین نوجوانوں کی نماز جنازہ میں ہزاروں افراد نے شرکت کی۔ کشمیر میڈیاسروس کے مطابق فوجیوں نے زاہد احمد، ناصر چڈرو اور عاقب احمد شیخ کو بدھ کے روزضلع اسلام آباد کے علاقے پزل پورہ میں محاصرے اور تلاشی کی کارروائی کے دوران ایک جعلی مقابلے میں شہید کیا تھا۔ شہید نوجوانوں کے آخری دیدار کیلئے خواتین اور بچوں سمیت بڑی تعداد میں لوگ انکے آبائی علاقوں بیج باڑہ، ارونی اور ریڈ ونی میں اُمنڈ آئے۔ بعد ازاں شہداء کے جسد خاکی جلوسوں کی صورت میں تدفین کیلئے مقامی قبرستانوں میں پہنچائے گئے۔لوگوں نے اس موقع پر آزادی کے حق میں فلک شگاف نعرے لگائے اور پاکستانی پرچم لہرائے۔ دریں اثنا مقبوضہ وادی کشمیر اور جموں خطے کے مسلم اکثریتی علاقوں میں 74ویں روز بھی بھارتی فوجی محاصرہ اور مواصلات کی معطلی برقرار ہے۔اہم کاروباری سرگرمیاں ٹھپ ہیں جبکہ سڑکوں پر پبلک ٹرانسپورٹ معطل ہے۔ مزاحمتی یوتھ لیگ نے آئندہ ہفتے کیلئے احتجاجی کیلنڈر جاری کرتے ہوئے کشمیریوں پر زوردیا ہے کہ وہ کیلنڈر کے پروگراموں پر پوری طرح عمل کریں۔دوسری جانبناروے میں کشمیر پارلیمنٹرین گروپ کے چیئرمین اور کرسچن ڈیموکریٹ پارٹی ناروے کے رہنما کنوت اریلد ھاریدے مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورتحال کو آئندہ ہفتے قومی نارویجن پارلیمنٹ میں اْٹھائیں گے۔کشمیر سکینڈے نیوین کونسل کے سربراہ اور کرسچن ڈیموکریٹ پارٹی کے خصوصی مشیر کشمیری نژاد نارویجن سیاستدان سردار علی شاہنواز خان کے مطابق نارویجن پارلیمنٹ میں مسئلہ کشمیر پر بحث آئندہ بدھ کو متوقع ہے۔اس مباحثے کے دوران ناروے کی وزیر خارجہ اینے اریکسن سرودے پارلیمنٹ میں کشمیر گروپ کے چیئرمین کنوت اریلد ھاریدے کے طرف سے کشمیر پر اْٹھائے گئے سوال کا جواب دیں گی۔

مقبوضہ کشمیر

مزید :

صفحہ اول -