حکومت کومزید وقت دینا ملکی سلامتی سے کھیلنے کے مترادف ہوگا، بلاول بھٹو زرداری

حکومت کومزید وقت دینا ملکی سلامتی سے کھیلنے کے مترادف ہوگا، بلاول بھٹو ...
حکومت کومزید وقت دینا ملکی سلامتی سے کھیلنے کے مترادف ہوگا، بلاول بھٹو زرداری

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئر مین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہاہے کہ حکومت کومزید وقت دینا ملکی سلامتی سے کھیلنے کے مترادف ہوگا ،وقت آگیاہے کہ سلیکٹڈ وزیر اعظم کو گھر بھیجنے کیلئے فیصلہ کن سیاست کی جائے ،سی پیک پر کام بند کردیا گیا ہے ، معیشت کا برا حال ہے۔

کراچی میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹوزرداری نے کہا کہ حکومت کو مزید وقت دینا ملکی سلامتی سے کھیلنے کے مترادف ہوگا ، ملک کو آئی ایم کے پاس گروی رکھوا دیا گیا ہے ، سی پیک پر کام بند کردیا گیا ہے ، معیشت کا برا حال ہے، کوئی بتائے گا پاکستان آن عالمی سطح پر تنہا کیوں ہے ؟ انہوں نے کہا کہ تاریخ میں پہلی بار تین روز تک الیکشن کے نتائج نہیں دیئے گئے جو سلیکٹڈ حکومت ہوتی ہے۔ و ہ عوام کے مسائل حل نہیں کرسکتی ۔ انہوں نے کہا کہ وقت آگیاہے کہ حکومت کوگھر بھیجنے کیلئے فیصلہ کن اقدام اٹھایا جائے ، سیاسی لوگوں کونا اہل کرکے جیل بھیج دیا گیا ہے ، کیا یہ وہ پاکستان ہے جس کاخواب قائد اعظم نے دیکھا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ آج ملک میں جس طرف نظر دوڑائیں ناانصافی نظر آتی ہے، بے نظیر بھٹو نے جان دیدی لیکن کسی آمر کے سامنے سر نہیں جھکایا ۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کا سفر بھٹو کی سوچ اور فلسفے سے شروع ہوا، ہم سانحہ کار ساز کے شہداءکونہیں بھول سکتے ، سانحہ کارساز کو 11سال ہوگئے ہیں، کیا یہ وہ پاکستان ہے جس کے لئے ہمارے پیاروں نے قربانیاں دی تھیں؟

بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھاکہ پچاس برس کے سفر میں پیپلز پارٹی نے بہت اتار چڑھاﺅ دیکھے ہیں، ہم چاہتے ہیں کہ ادارے غیر سیاسی ہوں۔ عمران خان کی دھاندلی زدہ حکومت کوگھر بھیجیں گے ، پاکستان کو آج دنیا میں کوئی قرضہ دینے کیلئے تیار نہیں ہے۔ عمران خان میں اتنی اہلیت نہیں ہے کہ وہ 20کروڑ کاملک چلا سکیں، وقت آگیاہے کہ سلیکٹڈ وزیر اعظم کو گھر بھیجنے کیلئے فیصلہ کن سیاست کی جائے ۔انہوں نے کہا کہ آج پاکستان دنیا میں تنہا کھڑا ہے اور کوئی ملک ساتھ دینے کیلئے تیار نہیں ہے ۔

مزید : اہم خبریں /قومی