2018 کے الیکشن میں بدترین دھاندلی ہوئی تھی، مولانا فضل الرحمن

    2018 کے الیکشن میں بدترین دھاندلی ہوئی تھی، مولانا فضل الرحمن

  

 کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک)جمعیت علماء اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ مولانا عادل کے قاتلوں کو تصویر ہونے کے باوجود اب تک گرفتار نہیں کیا گیا۔مولانا فضل الرحمان اتوار کو جامعہ فاروقیہ گئے جہاں انہوں نے مولانا ڈاکٹر عادل کے صاحبزادے اور دیگر علماء سے اظہار تعزیت کیا۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ شہر قائد کو ماضی میں بھی خون سے نہلایا گیا۔ انہوں نے کہا کہ عوامی رابطہ مہم شروع کردی ہے جس کی کل اچھی ابتدا ہوئی، 2018 کے الیکشن میں بدترین دھاندلی ہوئی جس کے نتیجے میں یہ حکومت وجود میں آئی،یہ دھاندلی کسی نے تو کی ہے ہم اپنے اداروں سے شکایت نہیں کرینگے تو کس سے کرینگے؟۔

فضل الرحمن

مزید :

صفحہ اول -